ولد الشیخ کا یورپی دورہ مکمل اور یمنی حل میں تاخیر کے مضمرات کے بارے میں انتباہ - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق الاوسط
کو: ہفتہ, 18 مارچ, 2017
0

ولد الشیخ کا یورپی دورہ مکمل اور یمنی حل میں تاخیر کے مضمرات کے بارے میں انتباہ

1489775809123725900

پرسوں برلن میں اقوام متحدہ کے ایلچی جرمن وزیر خارجہ سے ملاقات کرتے ہوئے (جرمن وزارت خارجہ کے صفحہ سے "ٹویٹر”)

 

لندن: "الشرق الاوسط”

      یمن کے لئے اقوام متحدہ کے ایلچی اسماعیل ولد الشیخ احمد نے کہا کہ ” ایک منصفانہ اور متوازن جامع معاہدے تک پہنچنے کے لئے جو فریم ورک میں نےاطراف کو  پیش کیا  اس سے اہم جماعتوں کی سیاسی اور سیکورٹی خدشات دونوں پتہ چلتے ہیں”۔ انہوں نے مزید کہا کہ معاہدے کے حصول میں تاخیر انتہا پسندی، عدم استحکام اور انسانی  بحران میں اضافے کے سوائے   اور کچھ نہیں دے گی۔ انہوں نے اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ بنیادی طور پر ایک افسوسناک ہے کہ "موجودہ صورت حال نہ صرف یمن میں دہشت گرد جماعتوں میں توسیع کاباعث ہے بلکہ دنیا کے دیگر علاقوں میں بھی اضافے کا باعث ہے”۔

      اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی نے اپنے بیان میں  زور دیتے ہوئے کہا کہ عالمی برادری  کو چاہئے کہ وہ تمام متحارب فریقوں  کو تحمل کرنے پر راضی کرنے،  یمنیوں کو درپیش مشکلات کے خاتمہ میں مدد اور تنازعوں  کا مذاکرات کے ذریعے سیاسی حل تلاش کرنے کی حوصلہ افزائی کرنے میں حتی المقدور کوشش کرے  ۔

      اقوام متحدہ کےسیکرٹری جنرل کی جانب سے  یمن کے لئے خصوصی ایلچی نے اپنا چار روزہ یورپی دورہ مکمل کیا، جس کے دوران یمن کی صورت حال کے بارے میں اہم عہدیداران اور مشرق وسطی کے امور کے ماہرین سے مشاورت کی۔

ہفتہ 19 جمادى الثانی 1438 ہجری­ 18 مارچ 2017ء  شمارہ: (13990)
شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>