سعودی کھلاڑی العتیبی "ایشین گیمز" میں باکسنگ کے فائنل میں پہنچ گئے

امیدیں "گرین ہینڈ" پر جمی ہوئی ہیں... اور چین اپنا غلبہ جاری رکھے ہوئے ہے

الفیصل تیراکی کے چیمپئنز کو میڈل دینے کی تقریب میں شرکت کے دوران (الشرق الاوسط)
الفیصل تیراکی کے چیمپئنز کو میڈل دینے کی تقریب میں شرکت کے دوران (الشرق الاوسط)
TT

سعودی کھلاڑی العتیبی "ایشین گیمز" میں باکسنگ کے فائنل میں پہنچ گئے

الفیصل تیراکی کے چیمپئنز کو میڈل دینے کی تقریب میں شرکت کے دوران (الشرق الاوسط)
الفیصل تیراکی کے چیمپئنز کو میڈل دینے کی تقریب میں شرکت کے دوران (الشرق الاوسط)

سعودی باکسنگ قومی ٹیم کے کھلاڑی عبدالعزیز العتیبی نے چین میں ہونے والے ایشین گیمز کے 51 کلوگرام وزن کے کھلاڑیوں کے مقابلے کے 16ویں راؤنڈ کے لیے کوالیفائی کر لیا ہے، جو کہ پیر کے روز اولمپک سینٹر میں ہونے والے مقابلے میں ترکمانستان کے کھلاڑی دیانیش اناسیدوف کے خلاف 4-1 سے فتح حاصل کرنے کے بعد ہے۔

جب کہ یہ اس وقت ہے کہ جب ان کی ساتھی کھلاڑی رغد النعیمی 66 کلوگرام وزن کی کھلاڑیوں کے مقابلے میں قازقستان کی ناتالیہ بوغدانووا سے شکست کھانے کے بعد حاکم کے فیصلے پر ٹورنامنٹ کے مقابلوں کو چھوڑ دیا۔

دوسری جانب، سعودی ہینڈ بال ٹیم نے چوتھے گروپ کے مقابلوں میں اپنا دوسرا میچ منگولیا کی ٹیم کے خلاف 45-15 کے اسکور کے ساتھ جیت لیا ہے۔ (...)

منگل-11 ربیع الاول 1445ہجری، 26 ستمبر 2023، شمارہ نمبر[16373]



"قطر ٹورنامنٹ" میں فرانسیسی جوڑی گرینیئر اور مولر 16ویں راؤنڈ میں پہنچ گئی

فرانسیسی ٹینس کھلاڑی ہیوگو گرینیئر (گیتی)
فرانسیسی ٹینس کھلاڑی ہیوگو گرینیئر (گیتی)
TT

"قطر ٹورنامنٹ" میں فرانسیسی جوڑی گرینیئر اور مولر 16ویں راؤنڈ میں پہنچ گئی

فرانسیسی ٹینس کھلاڑی ہیوگو گرینیئر (گیتی)
فرانسیسی ٹینس کھلاڑی ہیوگو گرینیئر (گیتی)

فرانس کے ٹینس کھلاڑی ہیوگو گرینیئر اور ایلکس مولر نے قطر اوپن ٹینس ٹورنامنٹ میں مردوں کے انفرادی مقابلوں میں 16ویں راؤنڈ کے لیے کوالیفائی کر لیا ہے۔

مولر نے سلواکیہ کے اپنے حریف لوکاس کلین کو دو گروپس میں بغیر کسی جواب کے 4-6 اور 4-6 سے شکست دی جبکہ گرینیئر نے امریکی میکسم کریسی کو دو گروپس میں بغیر کسی جواب کے 4-6 اور  4-6 سے شکست دی۔

اسی طرح چیک کے وٹ کوپرویکا بھی اسی راؤنڈ میں پہنچ چکے ہیں، انہوں نے جرمن کھلاڑی میکسیملین مارٹیر کو دو گروپس میں بغیر کسی جواب کے 6-3 اور 1-6 سے شکست دی۔

جب کہ اطالوی جولیو زبیری نے بھی بوسنیا کے گومر دامر کو 5-7 اور 1-6 سے شکست دے کر 16ویں راؤنڈ کے لیے کوالیفائی کر لیا ہے۔

پیر-09 شعبان 1445ہجری، 19 فروری 2024، شمارہ نمبر[16519]


"یورپی چیمپئنز لیگ" میں ڈیاز نے ریال میڈرڈ کو لیپزگ کے خلاف مشکل فتح دلائی

ڈیاز کے واحد گول کے بعد ریال میڈرڈ کے کھلاڑیوں کی خوشی کا منظر (اے ایف پی)
ڈیاز کے واحد گول کے بعد ریال میڈرڈ کے کھلاڑیوں کی خوشی کا منظر (اے ایف پی)
TT

"یورپی چیمپئنز لیگ" میں ڈیاز نے ریال میڈرڈ کو لیپزگ کے خلاف مشکل فتح دلائی

ڈیاز کے واحد گول کے بعد ریال میڈرڈ کے کھلاڑیوں کی خوشی کا منظر (اے ایف پی)
ڈیاز کے واحد گول کے بعد ریال میڈرڈ کے کھلاڑیوں کی خوشی کا منظر (اے ایف پی)

یورپی چیمپیئنز لیگ کے 16ویں راؤنڈ کے پہلے مرحلے میں کل منگل کے روز ہسپانوی کلب ریال میڈرڈ کی ٹیم جرمنی کے لیپزگ کلب کی ٹیم سے 1-0 گول کے ساتھ بہترین فتح حاصل کر کے واپس لوٹی۔

ابراہیم ڈیاز نے شاندار انفرادی کوشش کے بعد میچ کا واحد گول 49ویں منٹ میں کیا، جب کہ وہ انگلش مڈفیلڈر کھلاڑی جوڈ بیلنگھم کی جگہ کھیل رہے تھے۔

کیونکہ بیلنگھم گزشتہ ہفتہ کے روز ہسپانوی لیگ میں گیرونا کے خلاف اپنی ٹیم کی 4-0 سے فتح کے دوران دائیں ٹخنے میں موچ کے بعد اس میچ سے غائب تھے۔

بیلنگھم ہسپانوی لیگ میں 16 گول کے ساتھ ٹاپ اسکورر ہیں، اسی طرح انہوں نے اس سیزن کے آغاز میں جرمنی کی بوروسیا ڈورٹمنڈ سے رائل رینک میں جانے کے بعد مختلف 29 میچوں میں 20 گول کیے ہیں۔(...)

بدھ-04 شعبان 1445ہجری، 14 فروری 2024، شمارہ نمبر[16514]


"ریاض سیزن" مصر کپ کے فائنل میں الاہلی اور زمالک کلب کی ٹیموں کی میزبانی کر رہا ہے

یہ میچ "فرسٹ پارک" سٹیڈیم میں کھیلا جائے گا (ریاض سیزن)
یہ میچ "فرسٹ پارک" سٹیڈیم میں کھیلا جائے گا (ریاض سیزن)
TT

"ریاض سیزن" مصر کپ کے فائنل میں الاہلی اور زمالک کلب کی ٹیموں کی میزبانی کر رہا ہے

یہ میچ "فرسٹ پارک" سٹیڈیم میں کھیلا جائے گا (ریاض سیزن)
یہ میچ "فرسٹ پارک" سٹیڈیم میں کھیلا جائے گا (ریاض سیزن)

ریاض سیزن نے اپنے چوتھے ایڈیشن میں 8 مارچ کو مصر کپ کے فائنل میچ کی میزبانی اور اسپانسر شپ کا اعلان کیا ہے، جو دارالحکومت ریاض کے "فرسٹ پارک" اسٹیڈیم میں دیگر سرگرمیوں کے ساتھ مصر کے الاہلی اور زمالک کلبوں کے درمیان کھیلا جائے گا۔

دوسری جانب سعودی فٹ بال فیڈریشن کونسل کے چیئرمین یاسر المسحل نے کہا کہ "ریاض سیزن سے پہلے اسپورٹس کے بڑے ایونٹس کو اپنی جانب متوجہ کرنا اور انہیں اسپانسر کرنا، جیسے کہ مصر کپ، ایک غیر معمولی موقع ہے جو ملک کے تمام شعبوں کے درمیان نتیجہ خیز تعاون اور تعمیری ہم آہنگی کا عکاس ہے۔ جب کہ مملکت میں کھیلوں کے بڑے ایونٹس کے انعقاد اور ان کی میزبانی سے تمام شعبوں میں ترقی اور تنوع اجاگر ہوتی ہے اور اس سے مملکت کھیلوں کی دنیا میں پہلی ترجیح بنے گی۔"

مصری فٹ بال ایسوسی ایشن کے صدر جمال علام نے تصدیق کی کہ یہ قدم مملکت سعودی عرب اور عرب جمہوریہ مصر کے درمیان تعلقات کی حمایت اور مملکت میں مقیم مصری شائقین کے مطالبے کے جواب میں سامنے آیا ہے، علاوہ ازیں، فٹ بال کے اس ایونٹ میں سعودی شائقین کی بھی بھرپور شرکت کریں  گے۔ (...)

منگل-03 شعبان 1445ہجری، 13 فروری 2024، شمارہ نمبر[16513]


افریقہ کپ میں "ہاتھی اپنی موت سے واپس لوٹ آئے" کے عنوان سے کہانی مکمل

کوٹ ڈی آئیور کے کھلاڑی کانٹینینٹل کپ میں اپنی فتح کا جشن مناتے ہوئے (اے پی)
کوٹ ڈی آئیور کے کھلاڑی کانٹینینٹل کپ میں اپنی فتح کا جشن مناتے ہوئے (اے پی)
TT

افریقہ کپ میں "ہاتھی اپنی موت سے واپس لوٹ آئے" کے عنوان سے کہانی مکمل

کوٹ ڈی آئیور کے کھلاڑی کانٹینینٹل کپ میں اپنی فتح کا جشن مناتے ہوئے (اے پی)
کوٹ ڈی آئیور کے کھلاڑی کانٹینینٹل کپ میں اپنی فتح کا جشن مناتے ہوئے (اے پی)

آئیوری کوسٹ نے اپنی سرزمین پر اپنی ہی میزبانی میں منعقدہ افریقی کپ کے  فائنل میں اتوار کے روز ابیدجان میں نائیجیریا پر 2-1 سے کامیابی حاصل کر کے اپنی متاثر کن کہانی مکمل کر لی اور گویا "موت سے" واپس لوٹ کر آخر کار اپنی تاریخ میں تیسری بار یہ ٹائٹل جیت لیا۔

مقابلے کے پہلے ہاف میں آئیوری کوسٹ گول کرنے کے علاوہ ہر چیز میں بہترین تھا، جیسا کہ نائیجیریا نے (38) نمبر شرٹ پہنے اپنے کپتان ٹروسٹ ایکونگ کے ذریعے کارنر کک سے گول کرکے تقریباً اپنے پہلے موقع سے فائدہ اٹھایا۔ لیکن دوسرے ہاف میں، قسمت "ہاتھیوں" کی ٹیم (کوٹ ڈی آئیور) پر مہربان ہوئی، اور اس دوران پہلا گول سعودی الاہلی کلب کے کھلاڑی فرینک کیسیئر (62 نمبر والی شرٹ) نے کیا اور دوسرا گول جرمن بوروسیا ڈورٹمنڈ کلب کے کھلاڑی اور کینسر کے مرض سے صحتیابی پانے والے اسٹرائیکر سیبسٹین ہالر نے کیا، اس طرح 1992 اور 2015 کے بعد اب تیسری بار یہ ٹائٹل جیتنے میں کامیاب ہوئی۔

اگرچہ آئیوری کوسٹ نے فائنلز کا آغاز کیا، لیکن اسے ایک کے بعد ایک دھچکا لگا اور ان میں استوائی گنی کے خلاف ذلت آمیز شکست نے اسے نظریاتی طور پر دو نقصانات کے ساتھ گروپ مرحلے سے باہر کر دیا، جن میں سے ایک خاص طور پر نائجیریا کے خلاف 0-1 سے شکست بھی تھی۔ مراکش نے زامبیا کو شکست دے کر گویا اسے ایک تحفہ دیا، یوں اس نے تیسری پوزیشن حاصل کرنے والی چار بہترین ٹیموں میں سے بدترین ٹیم کے طور پر کوالیفائی کر لیا۔

پیر-02 شعبان 1445ہجری، 12 فروری 2024، شمارہ نمبر[16512]


ایران پر ہماری فتح شکوک و شبہات کا جواب ہے: اسماعیل محمد "الشرق الاوسط سے"

قطر کی قومی ٹیم کے کھلاڑی اسماعیل محمد (تصویر: علی خمج)
قطر کی قومی ٹیم کے کھلاڑی اسماعیل محمد (تصویر: علی خمج)
TT

ایران پر ہماری فتح شکوک و شبہات کا جواب ہے: اسماعیل محمد "الشرق الاوسط سے"

قطر کی قومی ٹیم کے کھلاڑی اسماعیل محمد (تصویر: علی خمج)
قطر کی قومی ٹیم کے کھلاڑی اسماعیل محمد (تصویر: علی خمج)

قطر کی قومی ٹیم کے کھلاڑی اسماعیل محمد نے کہا ہے کہ "ایشین کپ 2023" کے سیمی فائنل میں ایران کا مقابلہ کرنا اگرچہ آسان نہیں تھا لیکن اس میں فتح سب کی محنت اور اعلیٰ کارکردگی کی بدولت ہے۔

 "الشرق الاوسط" کے ساتھ ایک انٹرویو میں اسماعیل محمد نے کہا: "یہ میچ آسان نہیں تھا۔ سب نے دیکھا کہ اس میں کیسا جوش و خروش تھا اور کیسے سنسنی خیرز اختتام ہوا، پہلے ایرانی ٹیم غالب آئی، پھر ہماری ٹیم واپس آئی اور آگے بڑھ گئی۔ "میرے خیال میں یہ کھلاڑیوں کی مضبوط توجہ اور اپنی کارکردگی پر خود اعتمادی کا نتیجہ ہے۔"

 اسماعیل محمد نے اپنی گفتگو کو جاری رکھتے ہوئے کہا: "مجھے لگتا ہے کہ آج ہم نے ان لوگوں کو جواب دیا ہے جو کہتے ہیں کہ قطر کی قومی ٹیم اچھی کارکردگی کا مظاہرہ نہیں کرتی۔ آج سب نے دیکھا کہ ٹیم نے کتنی خوبصورت کارکردگی دکھائی۔"(...)

جمعرات-27 رجب 1445ہجری، 08 فروری 2024، شمارہ نمبر[16508]


نیویارک کا "میٹ لائف" اسٹیڈیم 2026 کے ورلڈ کپ فائنل کا مقام

یہ اسٹیڈیم امریکی فٹ بال لیگ میں نیویارک جائنٹس اور نیویارک جیٹس کے میچوں کی میزبانی کرتا ہے (گیتی)
یہ اسٹیڈیم امریکی فٹ بال لیگ میں نیویارک جائنٹس اور نیویارک جیٹس کے میچوں کی میزبانی کرتا ہے (گیتی)
TT

نیویارک کا "میٹ لائف" اسٹیڈیم 2026 کے ورلڈ کپ فائنل کا مقام

یہ اسٹیڈیم امریکی فٹ بال لیگ میں نیویارک جائنٹس اور نیویارک جیٹس کے میچوں کی میزبانی کرتا ہے (گیتی)
یہ اسٹیڈیم امریکی فٹ بال لیگ میں نیویارک جائنٹس اور نیویارک جیٹس کے میچوں کی میزبانی کرتا ہے (گیتی)

انٹرنیشنل فٹبال فیڈریشن (فیفا) کے سوئس صدر گیانی انفینٹینو نے کل اتوار کے روز اعلان کیا کہ 2026 فٹ بال ورلڈ کپ کا افتتاح میکسیکو سٹی کے "اسٹیکا" اسٹیڈیم میں اور فائنل نیویارک میں ہوگا۔

پہلا فائنل، جس میں 32 کے بجائے 48 ٹیمیں حصہ لیں گی، میکسیکو، امریکہ اور کینیڈا میں منعقد ہو گا۔

اس طرح "اسٹیکا" اسٹیڈیم ورلڈ کپ کے افتتاحی میچ کی تین بار میزبانی کرنے والا پہلا اسٹیڈیم بن جائے گا، جیسا کہ اس سے قبل 1970 اور 1986 کے  مقابلوں کا آغاز یہاں سے ہوا، اس کے علاوہ اس نے دو فائنل میچوں کی بھی میزبانی کی جس میں برازیل نے اٹلی پر (4-1) سے اور ارجنٹائن نے مغربی جرمنی پر (3-2) سے کامیابی حاصل کی۔

ورلڈ کپ کا تئیسواں ایڈیشن تین ممالک کے 16 اسٹیڈیموں میں منعقد ہوگا، جس کا فائنل نیویارک کے "میٹ لائف اسٹیڈیم" میں، اور بالتفصیل امریکہ کی ریاست نیو جرسی کے علاقے ایسٹ ردرفورڈ میں منعقد ہوگا۔

انفینٹینو نے 19 جولائی 2026 کے فائنل میچ کے شیڈول اور مقام کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ یہ "اشتہارات کی تاریخ کا سب سے بڑا اعلان ہے۔" (...)

پیر-24 رجب 1445ہجری، 05 فروری 2024، شمارہ نمبر[16505]


میں افریقی کپ سے مراکش کے جلد باہر ہونے کی ذمہ داری قبول کرتا ہوں: الرکراکی

ولید الرکراکی چمپیئن شپ سے باہر نکلنے کے بعد مراکش کے کھلاڑیوں کو تسلی دے رہے ہیں (روئٹرز)
ولید الرکراکی چمپیئن شپ سے باہر نکلنے کے بعد مراکش کے کھلاڑیوں کو تسلی دے رہے ہیں (روئٹرز)
TT

میں افریقی کپ سے مراکش کے جلد باہر ہونے کی ذمہ داری قبول کرتا ہوں: الرکراکی

ولید الرکراکی چمپیئن شپ سے باہر نکلنے کے بعد مراکش کے کھلاڑیوں کو تسلی دے رہے ہیں (روئٹرز)
ولید الرکراکی چمپیئن شپ سے باہر نکلنے کے بعد مراکش کے کھلاڑیوں کو تسلی دے رہے ہیں (روئٹرز)

مراکش کے کوچ ولید الرکراکی نے افریقن کپ آف نیشنز کے سولھویں راؤنڈ سے اپنے ملک کے باہر ہونے کی ذمہ داری قبول کی ہے، جو کل منگل کے روز جنوبی کے خلاف 2-0 کے اسکور کے ساتھ چونکا دینے والی شکست کے بعد ہے۔ جب کہ ان کی ٹیم 2022 ورلڈ کپ کے سیمی فائنل میں پہنچی تھی۔

خیال رہے کہ تقریباً 14 ماہ قبل قطر میں ہونے والے ورلڈ کپ کے سیمی فائنل میں پہنچنے والی پہلی افریقی ٹیم بننے کے بعد، اس وقت آئیوری کوسٹ میں منعقدہ افریقن نیشن کپ جیتنے کے لیے مراکش کی ٹیم کو ایک مضبوط امیدوار شمار کیا جا رہا تھا، لیکن اسے اس ٹیم نے الوداع کہا جو دنیا میں 66ویں نمبر پر ہے۔

الرکراکی نے میچ کے بعد (بی این اسپورٹس) نیٹ ورک کو بتایا کہ "بہت ساری تکنیکی خرابیاں رہیں، ہم نے حملے کرنے میں صبر کا دامن چھوڑے رکھا اور عجلت سے کھیلا۔ ہم میچ کو پہلے ہاف میں ہی ختم کر سکتے تھے... لیکن ہم نے کوشش کی اور ہم پنالٹی کک کے ساتھ واپس لوٹتے، لیکن ہم نے اسے کھو دیا جس سے ہمیں بہت زیادہ تکلیف پہنچائی۔"

پیرس سینٹ جرمین کے دفاعی کھلاڑی اشرف حکیمی نے اختتام کے قریب کراس بار سے ٹکرانے کے بعد پنالٹی کک گنوا دی۔

مراکش کے شائقین کو 1976 میں افریقی ٹائٹل جیتنے کے بعد اب دوسری بار اسے حاصل کرنے کی بہت زیادہ امیدیں تھیں، جس کی وجہ موجودہ ٹیم کا سیمی فائنل میں 2018 کے عالمی چیمپئن فرانس سے ہارنے سے قبل قطر 2022 ورلڈ کپ کے ایڈیشن میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ تھا۔ (...)

بدھ-19 رجب 1445ہجری، 31 جنوری 2024، شمارہ نمبر[16500]


"افریقہ کپ" میں کوٹ ڈی آئیور نے سینیگال سے ٹائٹل چھین لیا... اور آٹھویں راؤنڈ میں پہنچ گیا

کوٹ ڈی آئیور کے کھلاڑی کوالیفائنگ کے بعد خوشی کا اظہار کرتے ہوئے (اے ایف پی)
کوٹ ڈی آئیور کے کھلاڑی کوالیفائنگ کے بعد خوشی کا اظہار کرتے ہوئے (اے ایف پی)
TT

"افریقہ کپ" میں کوٹ ڈی آئیور نے سینیگال سے ٹائٹل چھین لیا... اور آٹھویں راؤنڈ میں پہنچ گیا

کوٹ ڈی آئیور کے کھلاڑی کوالیفائنگ کے بعد خوشی کا اظہار کرتے ہوئے (اے ایف پی)
کوٹ ڈی آئیور کے کھلاڑی کوالیفائنگ کے بعد خوشی کا اظہار کرتے ہوئے (اے ایف پی)

کوٹ ڈی آئیوری کی قومی ٹیم نے چیمپیئن کے لقب والی سینیگال کی ٹیم کو پنالٹیز پر 5-4 سے شکست دی، جو کہ دونوں ٹیموں کے باقاعدہ اور اضافی وقت کے اختتام پر 1-1 سے برابر رہنے کے بعد ہے۔ اس طرح سے میزبان ملک افریقی ممالک کپ کے کوارٹر فائنل میں پہنچ گیا۔

ڈیفنڈر کھلاڑی موسی نیاکاتی نے سینیگال کے لیے تیسری پنالٹی کک گول پر لگنے سے مس کر دی، جبکہ کوٹ ڈی آئیور کے لیے فرینک کیسی پانچویں اور فیصلہ کن کک پر گول کرنے میں کامیاب رہے۔

سینیگال کی جانب سے حبیب دیالو نے کھیل شروع ہونے کے چوتھے منٹ میں پہلا گول کیا جبکہ دوسرے ہاف کے آخری منٹوں میں فرینک کیسی نے اضافی وقت میں گول کر کے اسے برابر کر دیا، اس کے بعد جب دونوں ٹیمیں اضافی وقت میں فیصلہ کرنے میں ناکام رہیں تو مجبوراً پنالٹی ککس کا سہارا لیا گیا۔

اب کوارٹر فائنل میں، کوٹ ڈی آئیوری کو مالی اور برکینا فاسو کے درمیان ہونے والے مقابلے کے فاتح کا انتظار ہے۔

سینیگال کی قومی ٹیم نے پہلے ہی منٹوں میں اپنی برتری کو کوٹ ڈی آئیور کے خلاف ابتدائی برتری میں بدل دیا تھا، جس کے بعد اگرچہ فٹبال زیادہ تر کوٹ ڈی آئیور کی ٹیم کے پاس رہا لیکن اس کا حریف کے گول کو کوئی حقیقی خطرہ نہیں تھا۔(...)

منگل-18 رجب 1445ہجری، 30 جنوری 2024، شمارہ نمبر[16499]


میسی سعودی عرب میں "آخری مقابلے" کے لیے تیار.... اور ان کا پھولوں اور بخور سے استقبال

ارجنٹائن کے لیجنڈ کھلاڑی اپنی ٹیم کے ساتھ سیزن کپ میں حصہ لینے کے لیے ریاض آمد پر (ریاض سیزن)
ارجنٹائن کے لیجنڈ کھلاڑی اپنی ٹیم کے ساتھ سیزن کپ میں حصہ لینے کے لیے ریاض آمد پر (ریاض سیزن)
TT

میسی سعودی عرب میں "آخری مقابلے" کے لیے تیار.... اور ان کا پھولوں اور بخور سے استقبال

ارجنٹائن کے لیجنڈ کھلاڑی اپنی ٹیم کے ساتھ سیزن کپ میں حصہ لینے کے لیے ریاض آمد پر (ریاض سیزن)
ارجنٹائن کے لیجنڈ کھلاڑی اپنی ٹیم کے ساتھ سیزن کپ میں حصہ لینے کے لیے ریاض آمد پر (ریاض سیزن)

سعودی عرب کے "الہلال" اور "النصر" کلبوں کے ساتھ ریاض سیزن کپ ٹورنامنٹ میں شرکت کی تیاری کے دوران قدیم سعودی روایات کے رنگ میں استقبال کے لیے آئے شائقین کے ہجوم کے درمیان انٹر میامی کا وفد ارجنٹائن کے لیجنڈ کھلاڑی لیونل میسی کی قیادت میں سعودی دارالحکومت ریاض کے ہوائی اڈے پر اترا۔

وفد کا پرتپاک استقبال امریکن کلب کے رنگوں سے مزین گلاب پھولوں کے گلدستوں، سعودی کافی اور بخور سے کیا گیا، اور کلب کے اراکین نے بہت جلد اپنے آپ کو فراخدلانہ مہمان نوازی اور قدیم سعودی روایات کے درمیان پایا۔

اسپورٹس سیزن کے لوگو والی ایک بس نے وفد کے اراکین کو ہوائی اڈے سے ان کی رہائش گاہ تک پہنچایا۔

خیال رہے کہ "ریاض سیزن" نے پہلے 2023 کے سیزن کپ کے میچوں کی تاریخوں کا اعلان کیا تھا کہ امریکی کلب انٹر میامی، الہلال اور النصر کلب بہت سے بین الاقوامی فٹبال اسٹارز کے ساتھ شرکت کریں گے۔(...)

جمعہ-14 رجب 1445ہجری، 26 جنوری 2024، شمارہ نمبر[16495]


"گروپوں" میں ہارنے کا مطلب الجزائر کی نسل کا خاتمہ ہے: الجزائر کے کوچ بلماضی کا بیان

جمال بلماضی (اے ایف پی)
جمال بلماضی (اے ایف پی)
TT

"گروپوں" میں ہارنے کا مطلب الجزائر کی نسل کا خاتمہ ہے: الجزائر کے کوچ بلماضی کا بیان

جمال بلماضی (اے ایف پی)
جمال بلماضی (اے ایف پی)

الجزائر کی قومی ٹیم کے کوچ جمال بلماضی نے کہا کہ وہ اپنی ٹیم کا موریطانیہ سے 1-0 کی شکست کے بعد افریقن کپ آف نیشنز کے گروپ مرحلے سے باہر ہونے کی ذمہ داری اپنے اوپر لیتے ہیں۔ جب کہ موریطانیہ کی ٹیم نے براعظمی ٹورنامنٹ میں اپنی پہلی کامیابی حاصل کی ہے۔

دو بار افریقی چیمپئن کا لقب حاصل کرنے والے الجزائر کی ٹیم صرف دو پوائنٹس کے ساتھ اپنے گروپ 4 میں سب سے نیچے ہے، جب کہ انگولا 7 پوائنٹس کے ساتھ سرفہرست اور بورکینا فاسو 4 پوائنٹس کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے۔

الجزائر نے بلماضی کی قیادت میں 2019 میں ٹائٹل جیتنے کے بعد مسلسل دوسری بار گروپ مرحلے میں ٹورنامنٹ سے باہر ہوا ہے۔

بلماضی نے پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ "میں الجزائر کو افریقن کپ تک پہنچانے والا دوسرا کوچ ہوں لیکن ہمیں پریس کانفرنس کا آغاز ان بیانات سے نہیں کرنا چاہیے۔

انہوں نے میچ کے آغاز میں اپنی ٹیم کے کنٹرول کی جانب اشارہ کرتے ہوئے مزید کہا کہ، "پہلا ہاف ایک سمت میں (الجزائر کے حق میں) تھا۔ لیکن (موریطانیہ) نے ایک ہی موقع میں گول کر دیا، آپ ان تمام اہداف کو دیکھ سکتے ہیں۔" ہم گول کرنے کے بہت سے مواقع پیدا کرتے ہیں لیکن ان سے فائدہ نہیں اٹھا پاتے۔ اگر دوسری ٹیمیں ہم پر حاوی رہتیں یا ہم گول کے مواقع پیدا نہ کر پاتے تو ہم کہہ سکتے تھے کہ امور ٹھیک نہیں ہیں لیکن ایسا نہیں ہے، اور سچ یہ ہے کہ ہم مسلسل دوسری بار پہلے راؤنڈ سے باہر ہو گئے ہیں اور اس کی ذمہ داری میں اپنے سر لیتا ہوں۔" (....)

بدھ-12 رجب 1445ہجری، 24 جنوری 2024، شمارہ نمبر[16493]