تقریبا 66 ٪ برقی توانائی عمارت کو ٹھنڈا کرنے میں صرف ہوتی ہے - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: پیر, 7 نومبر, 2016
0

تقریبا 66 ٪ برقی توانائی عمارت کو ٹھنڈا کرنے میں صرف ہوتی ہے

(توانا‏‏‏ئی کی صلاحیت): (ایگزاسٹ فین) 40٪ بجلی فراہم کرتا ہے

4-2

 (مشرق وسطی ): ریاض

توانائی کے سعودی سنٹر نے باور کرایا ہے کہ ایگزاسٹ فین ائرکنڈیشن میں صرف ہونے والی برقی توانا‏ئی سے تقریبا 40٪ کی بچت کرتا ہے۔ سنٹر نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ اسٹڈی اس جانب اشارہ کرتی ہے کہ موسم گرما میں استعمال ہونے والی برقی توانائی کا 66٪ عمارت کو ٹھنڈا کرنے میں چلا جاتا ہے یعنی توانائی کی زیادہ مقدار دیواروں اور چھتوں سے پیدا ہونے والی حرارت سے چھٹکارہ پانے میں چلی جاتی ہے، یہاں سے ایگزاسٹ فین کی اہمیت واضح ہوتی ہے کیونکہ یہ ائرکنڈیشن میں استعمال ہونے والی برقی توانائی کی مقدار کم کرنے میں اہم رول ادا کرتا ہے، یہ دیواروں اور چھتوں کے ذریعے نکلنے والی حرارت کو محدود کرنے سے ہوتا ہے۔ (صلاحیت) کے سنٹر نے اس جانب بھی اشارہ کیا کہ عمارتوں میں ایگزاسٹ فین کے بہت فائدے ہیں، ٹھنڈا یا گرم کرنے کے لئے استعمال ہونے والی برقی توانائی اور ائرکنڈیشن کے وقت اور اس کی ریپئرنگ کے اخراجات میں کمی ہوتی ہے۔ درجہ حرارت میں تبدیلی کی وجہ سے عمارت کے مواد کی حفاظت، عمارت کے اندر گھریلو سامان کی حفاظت، آرام کی سطح میں بلندی، آگ سے بچاؤ، بلندی کے وقت بوجھـ میں کمی اور ماحولیات کی حفاظت ہوتی ہے۔

صلاحیت کے سنٹر نے اس جانب بھی توجہ مبذول کرائی کہ ایگزاسٹ فین کا استعمال ائرکنڈیشن میں صرف ہونے والی برقی توانائی کو کم کرنے میں بڑی حد تک مدد کرتا ہے اگر سائنسی اور ٹکنیکی بنیاد پر اس کا اندازہ لگایا جاۓ تو یہ 30 سے 40٪ کے درمیان بنتی ہے۔ ایگزاسٹ فین دیواروں کے ذریعے نکلنے والی حرارت کو محدود کرنے میں کام کرتا ہے، اور مکان کی چھت سے نکلنے والی حرارت کو تقریبا 65٪ تک، گویا ائرکنڈیشن کے استعمال میں کمی کی وجہ سے اس کے کمپریسر پر دباؤ بھی کم پڑتا ہے؛ با الفاظ دیگر خرچ بھی کم، علاوہ ازیں ائرکنڈیشن کی عمر میں زیادتی اور اس کی ریپئرنگ کے اخراجت بھی کم ہو جاتے ہیں ۔

اس نے یہ بھی کہا کہ ائرکنڈیشن کی وسعت اس کے حجم اور ہوا میں درجۂ حرارت میں مطلوبہ ٹھنڈک کی بنا پر محدد ہو سکتی ہے، اور ایگزاسٹ فین کا استعمال جو اس حرارت کے نکلنے کو روک سکتا ہے اگر ائرکنڈیشن کی وسعت اور اس کی صلاحیت کم ہو، کیونکہ ائرکنڈیشن کی قیمت اس کی صلاحیت کے مطابق بلند ہوتی ہے، ایگزاسٹ فین کا استعمال ائرکنڈیشن کی قیمت میں کمی کا باعث بنتا ہے اور اس تک برقی توانا‏‏‏ئی کے ترسیل کے اخراجات بھی کم ہوتے ہیں۔

اس نے مزید وضاحت کی کہ ایگزاسٹ فین بیرونی موسم کی تبدیلی کی وجہ سے عمارت کے تعمیری مواد کی حفاظت میں کام کرتا ہے، دن کے اوقات میں درجۂ حرارت میں بہت زیادہ فرق کے نتیجے میں واقع ہوتا ہے، اس طرح تعمیراتی سامان پر درجۂ حرارت میں تیزی واقع ہونے سے عمارت میں شگاف اور دراڑیں پڑ جاتی ہیں، اس بات کی تاکید کی کہ آپس میں جڑی ہوئي عمارتیں بیرونی درجۂ حرارت سے بہت جلد متاثر ہوتی ہیں اس وجہ سے عمارت کے اندر بھی درجۂ حرارت ایک جیسا نہیں رہتا، بایں وجہ اگر مناسب ائرکنڈیشن مہیا نہ ہو تو تعمیراتی مواد ٹوٹ پھوٹ جاتا ہے اور بعض لوگ سامان کی حفاظت کے لئے گھر سے نکلتے وقت طویل وقت تک ائرکنڈیشن چالو چھوڑ کر چلے جاتے ہیں، یعنی بغیر ضرورت کے توانا‏ئی ضائع ہوتی رہتی ہے۔ توانائی کے صلاحیت کے سعودی مرکز نے بتایا کہ ایگزاسٹ فین آگ سے بچاؤ کے لئے اپنی طاقت میں مختلف ہوتے ہیں، بعض ایگزاسٹ فین درجۂ حرارت میں بلندی کا مقابلہ کرتے ہیں مثال کے طور پر پتھریلے دھاگے اور شیشے کے دھاگے جیسے اور پیرالایٹ، بعض ایگزاسٹ فین پگھل یا جل جاتے ہیں یا ان کے اندر سے دھواں خارج ہونے لگتا ہے جب معین درجۂ حرارت ہو مثلا پولیسٹرین اور پولی یورتھیں۔ اس نے مزید کہا کہ ایگزاسٹ فین بلندی کے بوجھـ کی قیمت کو کم کرنے میں مدد کرتے ہیں اس سے پیداواری یونٹوں، منتقل کرنے اور تقسیم کرنے والے نٹ پر دباو میں کمی آتی ہے جو نصف النھار کی گھڑیوں کے اثناء میں ائرکنڈیشن کے استعمال میں کمی لاتا ہے۔

علاوہ ازیں ماحولیات کے تحفظ میں بھی مدد کرتا ہے کیونکہ ائرکنڈیشن کے لئے مکینیکل وسائل استعمال کرنے سے ماحولیات کو نقصان پہنچانے والی گیس پیدا کرنے کا باعث بنتے ہیں مثال کے طور پر کاربن ڈائی آکسائڈ اور نائٹروجن جو ائرکنڈیشن کو چلانے کے لئے ضروری توانائی کے جلنے سے پیدا ہوتی ہیں، ان کو ایگزاسٹ فین کے استعمال سے بڑی حد تک کم کیا جا سکتا ہے۔

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>