مصری پونڈ میں قیمت کی تبدیلی کے بعد زبردست گراوٹ - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
به قلم:
کو: بدھ, 9 نومبر, 2016
0

مصری پونڈ میں قیمت کی تبدیلی کے بعد زبردست گراوٹ

مصرى مرکزی بینک:  چھ ارب  انٹرنیشنل بانڈز  ڈالر  کے ذریعہ نقد احتیاطی کو تقویت

economy-280316-6_0

قاہره: ﺻبری ﻧﺎﺟﺢ

مصر کے مرکزی بینک نے خطروں سے پر ایک تاریخی جرات مندانہ اقدام کیا جس کی وجہ سے مقامی کرنسی میں کافی گراوٹ آئی  ہے، اور متوازی مارکیٹ میں مصری پونڈ  کی تاریخی اعتبار سے زبردست گراوٹ آئی ہے، اور لوگوں کو اس بات کی توقع بھی تھی، حتی کہ یہ گراوٹ گزشتہ منگل کو سرکاری نرخ  سے 100فیصد سے زیادہ  تجاوز کر گئی ۔

کرنسی کی گراوٹ کے ساتھ ساتھ کل مرکزی بینک نے مقامی فائدہ کی شرح میں 3 فی صد اضافہ کرنے کا قرار داد پاس کیا ہے، اورلوگوں کی توقع  کے مطابق  کرنسی کی  قیمت میں گراوٹ کے بعد مہنگائی کا آنا ایک قدرتی نتیجہ ہے، اور کل مرکزی بینک کی مانیٹری پالیسی کمیٹی کے فیصلے کے مطابق اس نے ایک ڈالر کی قیمت 13 پاؤنڈ رکھا ہے، اور اس میں 10 فیصد کے اضافہ کا بھی امکان ہے، یعنی ایک ڈالر کی قیمت 14.30 پاؤنڈ تک پہونچ جائیگی، مجموعی طور پر پاؤنڈ میں 32.3 فیصد کی گراوٹ ہوگی،اور اتوار کے آغاز سے انٹربینک کے ذریعے مصر میں کام کرنے والے بینکوں کو غیر ملکی کرنسی کی قیمت لگانے میں آزادی دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔

گراوٹ کے  پہلے رد عمل کے طور پر ابتدائی ٹریڈنگ ہی میں مصری اسٹاک ایکسچینج میں 8.3 فیصد کا اضافہ ہوا ہے، لیکن سیشن کے اختتام پر 1.6 ارب پونڈ کے کل کاروبارکے مقابلہ میں ذریعہ آمدنی صرف 3.35 فیصد تک سمٹ کر رہ گئی ہے ۔

بین الاقوامی مالیاتی فنڈ اور یورپی بینک برائے تعمیر وترقی نے اس فیصلے  کا خیر مقدم کیا اور کہا کہ یہ فیصلہ مصر کے  قوت مسابقت کو بڑھائے گا، جیسے کہ زر مبادلہ کی شرح میں ترمیم کے فیصلہ کے بعد دو سال کے کچھ اصدارات کے اضافہ کے ساتھ استحقاق کی مختلف مدت کے ذریعہ مصر  کے ڈالر بانڈز نے زبردست چھلانگ لگائی-

اسی سلسلہ میں مصر کے مرکزی بینک کے گورنر طارق عامر نے کل کہا کہ انٹرنیشنل بانڈز   سے ذخائر میں 6 ارب ڈالر کا اضافہ ہوگا، اسی کے ساتھ اس بات کی طرف بھی اشارہ کیا کہ "ہم شرح تبادلہ کی پالیسی کے پابند ہیں، اور اگلے اتوار سے بینکوں کی شرح تبادلہ کا تعین ہوگا” ۔

 

متعلقہ عنوانات‬:, ,
شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>