اختلافات کی وجہ سے ٹرمپ کے وزیر خارجہ کے اعلان کرنےمیں تاخیر - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعرات, 24 نومبر, 2016
0

اختلافات کی وجہ سے ٹرمپ کے وزیر خارجہ کے اعلان کرنےمیں تاخیر

%d8%a7%d9%85%d8%b1%db%8c%da%a9%db%81

واشنگٹن: ہبہ قدسی

      کل جب امریکی نو منتخب صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے اقوام متحدہ میں امریکی سفیر کے عہدے کے لئے جنوبی کیرولینا ریاست کی گورنر "نیکی ہالی” کا انتخاب کیا تو وزير خارجہ اور وزیر دفاع  کے منتخب کرنے میں تاخیر کے سلسلہ میں تیزی سے سوالات اٹھنے لگے جبکہ ان کا مقصد یہ تھا کہ حکومت میں آنے کے بعد یہ عورت ان کی پارٹی کی پہلی منتخب شدہ عورت قرار پائے، اس کے باوجود منتقلی ٹیم کے قریبی ذرائع نے کہا کہ ٹرمپ کا ارادہ میسا چوسٹس کے سابق گورنر "مٹ رومنی” کو وزیر خارجہ اور ریٹائرڈ جنرل” جیمز میٹس” کو وزیر دفاع بنانے کا ہے۔

      انہیں ذرائع سے اس بات کا بھی علم ہوا کہ وزیر خارجہ کے اعلان میں تاخیراندرونی دباؤ کی وجہ سے ہوئی ہےکیونکہ اس عہدہ کے لئے ان کی ایک جماعت "رومنی” کے انتخاب کی تائید میں تھی  تو دوسری جماعت نیویارک کے میئر” روڈی جولیانی ” کے انتخاب کی تائید میں تھی  جبکہ ایک تیسری جماعت بھی تھی جو اس منصب کے سلسلہ میں نومنتخب صدر پر مذکورہ دونوں شخص کے علاوہ کسی اورشخص کے انتخاب کرنےکے لئے دباؤ ڈال رہی تھی۔

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>