"ولد الشیخ" عدن کی جانب- مذاکرات اور معاہدات کے لئے مہلت - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
کو: پیر, 28 نومبر, 2016
0

"ولد الشیخ” عدن کی جانب- مذاکرات اور معاہدات کے لئے مہلت

شیخ کے صاحبزادے عدن کی جانب۔ ۔ ۔ مذاکرات اور معاہدات کے لئے مہلت

ریاض کا رخ کر کے انہوں نے اپنا علاقائی دورہ جاری رکھا۔ ہم ان کی پیشکش میں تبدیلی کا مطالبہ کریں گے: یمنی سرکار

%d9%88%d9%84%d8%af-%d8%a7%d9%84%d8%b4%d9%8a%d8%ae

جنیوا میں منعقد ایک خصوصی میٹنگ میں یمنی فائل پر بات چیت کرنے کے بعد ابن شیخ نکلتے ہوئے (ا۔ف۔ب)

ریاض: عبد الہادی حبتور، عدن: محمد علی محسن

     امید کی جاتی ہے کہ اقوام متحدہ کے سفیر اسماعیل ولد الشیخ احمد آنے والے گھنٹوں میں یمن کی عارضہ دارالحکومت عدن کا رُخ کریں- وہاں وہ صدر عبد ربہ منصور ہادی سے ملاقات کریں گے جو خود بھی جنوبی شہر میں ابھی دو دن پہلے پہنچے ہیں- کل کئی ذرائع سے جیسا معلوم ہوا ہے کہ یہاں یہ لوگ یمنی بحران کے حل کی کوششوں پر بات چیت کریں گے۔

     امید کی جاتی ہے کہ اپنا علاقائی دورہ جاری رکھتے ہوئے ولد الشیخ ریاض سے جہاں وہ کل پہنچے ہیں مسقط ہوتے ہوئے عدن کا رخ کریں گے- ان کا مقصد بحران کے دونوں جماعتوں کی رضامندی ہے، تا کہ نئے مذاکرات کا انعقاد ہو جو ہفتہ دس دن تک برقرار رہے اور حتمی طور پر امن وسلامتی کا معاہدہ سامنے آسکے۔

     مسقط کا دورہ ختم کرنے کے بعد ولد الشیخ نے کہا کہ کل (گزرا ہوا) ریاض کا دورہ شروع کروں گا- اس کے بعد کویت کا رخ کروں گا تاکہ نئے دورہ سے متعلق کچھ گفت وشنید کر سکوں۔ ضرورت پڑنے پر میں عدن میں صدر ہادی کی زیارت کرنے کو بھی تیار ہوں۔ بات چیت کے لئے آنے والا دورہ ضروری ہے کہ بہت مختصر ہو، میرا مقصد حتمی معاہدہ پر دستخط کرنے کے لئے نئے دورے پر نکلنے کی مدت ہفتہ دس دن سے زیادہ نہ ہو۔

     یمنی وزیر خارجہ عبد الملک المخلافی نے ان واقعات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ولد الشیخ احمد عدن میں صدر ہادی سے ملاقات کریں گے، انہوں نے مزید یہ بھی کہا کہ ان کی سرکار اقوام متحدہ کے سفیر کو اس "روڈ میپ پر اپنا جواب” پیش کرے گی جو اقوام متحدہ نے پیش کیا تھا۔

     یمنی انسانی حقوق کے نائب وزیر محمد محسن عسکر نے اپنا کردار نبھاتے ہوئے "الشرق الاوسط” سے کہا کہ سرکار یہ ولد الشیخ کو خط حوالے کرے گـی جس میں وہ کچھ تاثر پیش کرے گی جس کا تعلق ان شقوں سے ہے جس کی پلاننگ اقوام متحدہ کے سفیر نے کی ہے اور خلیجی پہل باہم موافق عبوری صدر کی محدد کردہ صلاحیتوں اور مدت کا خاتمہ کرنے سے تعلق رکھتی ہے۔

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>