سعودی عرب کی حلب کو بچانے کی خاطر بین الاقوامی سطح پر اقدام کی قیادت - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
کو: پیر, 5 دسمبر, 2016
0

سعودی عرب کی حلب کو بچانے کی خاطر بین الاقوامی سطح پر اقدام کی قیادت

شام کی تعمیر نو کے لئے ایک ارب ڈالر مختص: عالمی بنک کی "الشرق الاوسط” سے گفتگو
1480863284116944800

شہری دفاعی رضا کار گورنریٹ ادلب کے شہر معرہ النعمان میں کل روسی طیاروں کے فضائی حملے کے بعد شہریوں کی متاثرہ اجتماعی جگہوں پر لگی آگ کو بجھانے کی کوشش کر رہا ہے

ریاض: فتح الرحمن یوسف – انقرہ: سعید عبد الرزاق

 

      سعودی عرب حلب کو بچانے کی خاطر  اقوام متحدہ میں ایک اقدام  کی قیادت کر رہا ہے۔ کیونکہ حلب کے مشرقی محلوں کو بھاری روسی فضائی حمایت کے ساتھ حکومتی اور اتحادی افواج کی طرف سے شدید حملوں کا سامنا ہے۔

       اقوام متحدہ میں سعودی عرب کے مستقل نمائندے عبد اللہ المعلمی نے "الشرق الاوسط” سے بات کرتے ہوئے انکشاف کیا کہ شام کی صورت حال پر قرار داد کے مسودے کی تیاری کے لئے سعودی قیادت میں اقوام متحدہ کے مختلف اداروں میں دوست اور برادر ملکوں کے ساتھ مفاہمتی اقدامات تیزی سے جاری ہیں اور امید ہے کہ اقوام متحدہ جلد ہی اسے تسلیم کرنے کا اعلان کرے گی۔ المعلمی نے نیویارک سے ٹیلی فون پر”الشرق الاوسط” سے بات کرتے ہوئے کہا کہ: "مملکت سعودی عرب، قطر، متحدہ عرب امارات اور جمہوریہ ترکی کے نمائندوں نے شام کی صورت حال کا جائزہ لینے کے لئے اقوام متحدہ میں ہنگامی اجلاس منعقد کرنے کے لئے واضح کال دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے یہ  اجلاس بلانے کی فوری ضرورت اس لئے محسوس کی کیونکہ ابھی تک وہاں کے حالات معمول پر نہیں آئے۔”

       انقرہ میں سفارتی ذرائع کے مطابق یہ سب چار ممالک کی طرف سے کی گئی کوششوں کے تناظر میں ہے تاکہ حلب کو بگڑتی ہوئی صورت حال سے بچانے اورفائر بندی کے حصول کی خاطر بین الاقوامی برادری کو مؤثر کردار ادا کرنے پر امادہ کیا جائے۔

      دریں اثناء بین الاقوامی ترقیاتی ایسوسی ایشن(آئی-ڈی-اے) کے صدر اور عالمی بنک کے نائب سربراہ "اکسل وان ٹروٹ سن برگ” نے "الشرق الاوسط” سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ "شامی حدود میں امن وامان کے بعد اس کی تعمیر نو کے لیے ایک ارب ڈالر دیئے جانے کا رجحان پایا جاتا ہے۔”

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>