كارلوف کا قتل سفارتی مشنوں کے لئے باعث تشویش - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
کو: بدھ, 21 دسمبر, 2016
0

كارلوف کا قتل سفارتی مشنوں کے لئے باعث تشویش

sojdfjsdgjjgdrsuweuh

انقرہ: سعيد عبد الرازق

     پرسوں شام انقرہ میں روسی سفیر "آندریا کارلوف” کو ایک فنی نمائش کے افتتاح کے دوران قتل کرنے کے واقعہ کے بعد ترکی میں سفارتی مشنوں کو تشویش لاحق ہے۔ واشنگٹن اور تہران دونوں نے اپنے سفارتی مشن کو سفارتی کاروائی معطل کرنے اور اپنے شہریوں کو چوکنا رہنے کے احکامات جاری کئے ہیں۔

     ترکی کے دارالحکومت میں امریکی سفارت خانے نے انقرہ، استنبول اور ادانا میں اپنے مشنز بند کرنے کا اعلان کیا ہے۔ انقرہ میں امریکی سفارت خانہ چانکیا میونسپلٹی کے آرٹس سینٹر والی شاہراہ کے دوسری جانب واقع ہے جہاں روسی سفیر کو قتل کیا گیا ہے۔ ریاست ہائے متحدہ امریکہ نے رواں سال کے دوران ترکی میں کردوں اور "داعش” کی جانب منسوب حملوں کے سلسلہ کے بعد بار بار اپنے شہریوں کو یہاں پر سیکورٹی خطرات سے خبردار کیا ہے۔ سفارتی بیان میں کہا گیا ہے کہ "امریکی سفارت خانہ اپنے شہریوں کو حتی المقدور چوکنا رہنے اور ان کی ذاتی حفاظت کو یقینی بنانے کے لیے ضروری اقدامات کی یاد دہانی کراتا ہے”۔

     دریں اثناء، کل ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان بہرام قاسمی نے استنبول، ترابزون اورارضروم میں ایرانی سفارت خانے اور قونصلیٹ کو وقتی طور پر بند کرنے کا اعلان کیا ہے۔

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>