ایران پر "قاسملو پارٹی" کے ہیڈ کوارٹر میں دھماکہ کرانے کا الزام - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعرات, 22 دسمبر, 2016
0

ایران پر "قاسملو پارٹی” کے ہیڈ کوارٹر میں دھماکہ کرانے کا الزام

اربیل کی جانب سے حملہ کی مذمت اور ذمہ داران کے خلاف قانونی کاروائی کی یقین دہانی

arbeel-iraq22-12-2016

 

اربیل – لندن : "الشرق الاوسط”

        کل ایرانی مخالف کرد پارٹی نے تہران پر الزام عائد کیا ہے کہ پرسوں رات عراق کے علاقے کردستان میں اس کے ہیڈ کوارٹر پر حملہ کرنے میں اسکا ہاتھ ہے۔ دریں اثناء صوبہ کردستان کی حکومت نےحملہ کی مذمت کی اور اس کے قصورواروں کے خلاف قانونی کارروائی کرنے کے عزم کا اظہار کیا۔

       لندن میں کردستانی ڈیموکریٹک پارٹی ایران کے نمائندے”مولود سوارہ” نے "الشرق الاوسط” سے بات کرتے ہوئے کہا کہ دھماکے میں مشرقی اربیل کے کویسنجق نامی علاقے میں انکے ہیڈ کوارٹر کو نشانہ بنایا گیا جہاں پارٹی کے جنرل سیکرٹری عبد الرحمن قاسملو کی سالگرہ منائی جا رہی تھی جو ایرانی خفیہ ایجنسی کے ہاتھوں جولائی 1989 میں آسٹریا کے دارالحکومت ویینا میں قتل کر دیئے گئے تھے۔ "سوارہ” نے ایرانی خفیہ ایجنسی پر الزام عائد کیا کہ وہ اس دھماکہ کے پیچھے ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ "تہران دہشت گردی کی کارروائیوں کے ذریعے پارٹی کی تمام سرگرمیوں کو نشانہ بنانے کی کوشش کررہا ہے”۔ "سوراہ” کے مطابق اس دھماکہ میں 6 افراد ہلاک ہوئے جن میں "آسایش” نامی کرد سیکورٹی کے دو افراد بھی شامل ہیں۔

       دریں اثناء صوبۂ کردستان کی حکومت نے بم دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے یقین دہانی کی کہ وہ "اس دہشت گردانہ جرم کا ارتکاب کرنے والوں کو قانونی سزا دلانے کی  بھرپور کوشش کرے گی  اور ان میں وہ بھی شامل ہیں جو اس جرم کی پشت پناہی کر رہے ہیں۔

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>