حزب اللہ کی وادیٔ بردی میں جنگ کی قیادت - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
به قلم:
کو: بدھ, 4 جنوری, 2017
0

حزب اللہ کی وادیٔ بردی میں جنگ کی قیادت

تہران کا شام سے واپسی سے انکار… اور شامی حکومت سے مذاکرت کے لئے کردوں کی 3 شرائط
a4yea5y4545u4u6uj6hu66

کل شمالی حلب کے گاؤں دودیان میں دو بہن بھائی اپنے تباہ شدہ خاندانی گھر سے بچ جانے والے سامان کو منتقل کرتے ہوئے (رويٹرز)

بيروت: يوسف دياب – بولا اسطيح

        کل کی اطلاعات کے مطابق جنگ بندی کے ضمن میں "حزب اللہ” کی قیادت میں بڑے پیمانے پر زمینی حملے دمشق کے گاؤں وادیٔ بردی تک پھیل چکے ہیں۔ دریں اثناء کہ تہران نے اعلان کیا ہے کہ  حزب اللہ کی افواج شام سے انخلاء نہیں کریں گی، جیسا کہ ترک فوج نے روس کے ساتھ کئے گئے جنگ بندی کے معاہدے کے تحت اسے سنگین خلاف ورزی کہا ہے۔ دوسری جانب کردوں نے شامی حکومت کے ساتھ مذاکرات کے لئے تین بنیادی شرائط رکھی ہیں۔

        شام میں انسانی حقوق کی رصد گاہ نے کہا کہ "وادیٔ بردی میں زمینی حملہ کی قیادت (حزب اللہ) کر رہی ہے۔ اس دوران شامی حکومت فضائی حملوں، گولہ باری اور میزائلوں کے ذریعے اپنے آپ کو محفوظ بنا رہی ہے، جبکہ برگیڈ چار اور ریپبلکن گارڈ کا علاقے میں کردار صرف امداد تک محدود ہے۔

       دریں اثناء، ایرانی مرشد علی خامنئی کے سینئر مشیر علی اکبر ولایتی نے اس بات پر زور دیا کہ شام میں جنگ بندی کے سمجھوتے کے باوجود "حزب اللہ” اس ملک سے نہیں جائے گی۔ انہوں نے نائب عراقی صدر نوری المالکی سے تہران میں ملاقات کے بعد صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا "شام میں جنگ بندی کے سمجھوتے کے بعد (حزب اللہ) کا انخلاء دشمنوں کا پروپیگنڈا ہے”۔

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>