انقلابیوں کے نصاب پر یمن کی تشویش - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
به قلم:
کو: بدھ, 4 جنوری, 2017
0

انقلابیوں کے نصاب پر یمن کی تشویش

6jw56jw56jw6jw6j56j6j

 

عدن: عرفات مدابش

         یمن میں انقلابی افراد بنیادی تعلیمی نصاب میں ترامیم کر رہے ہیں۔ قانونی حکومت نے اس کے پیچھے نظریاتی محرک قرار دیا ہے۔

       صنعا میں "الشرق الاوسط” کے ذرائع نے اطلاع دی کہ  حوثی باغیوں کے رہنما کے بھائی یحیی بدر الدین الحوثی، جسے انقلابی حکومت نے وزیر تعلیم وتربیت تعیینات کیا ہے، کی جانب سے اپنے منصب سے فائدہ اٹھاتے ہوئے کلی کی بجائے جزوی طور پر نصاب میں تبدیلی کے منصوبہ پر عمل کرنے کی کوشش کر رہے ہیں، جس میں معین احادیث اور بعض صحابہ کرامؓ کے نام حذف کرنے اور ان  کی جگہ دوسری احادیث ونام ڈالے گئے ہیں۔

       یمنی وزیر تعلیم وتربیت ڈاکٹر عبد اللہ لملس نے "الشرق الاوسط” سے کہا کہ "ہم نے پہلے ہی اس قسم کے رجحانات سے محتاط ہو کر 2015 میں ایک فیصلہ کیا جو کہ 2014 میں چھپنے والی نصابی کتابوں کو مد نظر رکھتے ہوئے کیا گیا تھا جبکہ یہ نصاب جمہوریہ یمن کی تمام تعلیمی اور سیاسی طاقتوں کے اتفاق سے اشاعت کیا گیا تھا”۔ جس میں زور دیا گیا تھا کہ "انقلابی لوگ پورے نصاب کو تبدیل کرنے کی بجائے اس کے صفحات میں ترامیم لائیں گے، یہ مسئلہ نصاب کو تبدیل کرنے سے زیادہ خطرناک ہے کیونکہ نصاب میں تبدیلی کے لئے طویل عرصہ اور سخت محنت درکار ہے”۔

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>