عباس ویٹیکن میں فلسطینی سفارت خانے کا افتتاح کر رہے ہیں اور پیرس کانفرنس کو امن کے لیے آخری موقع قرار دے رہے ہیں - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: اتوار, 15 جنوری, 2017
0

عباس ویٹیکن میں فلسطینی سفارت خانے کا افتتاح کر رہے ہیں اور پیرس کانفرنس کو امن کے لیے آخری موقع قرار دے رہے ہیں

1484418938080353100

فلسطینی صدر محمود عباس کل ویٹیکن میں فلسطینی سفارت خانے کے افتتاح کے دوران (ا۔ب۔ا)

 

رام الله: كفاح زبون – لندن: "الشرق الاوسط”

      فلسطینی صدر محمود عباس نے کہا کہ "دنیا کے مزید ممالک کی طرف سے فلسطینی ریاست کو تسلیم کرنے سے جلد امن قائم ہوگا”۔ مگر انہوں نے ویٹیکن میں فلسطینی ریاست کے سفارت خانے کے افتتاح کے دوران ایک مختصر تقریر میں امریکی سفارت خانے کی تل ابیب سے القدس منتقلی پر خبردار کیا، کیونکہ ان کے مطابق اس سے امن عمل متاثر اور ختم ہو جائے گا۔

      صدر عباس نے تقریبا 20 منٹ تک پوپ فرانسس سے ملاقات کی جنہوں نے انتہائی گرمجوشی سے ان کا استقبال کیا۔ اس دوران تحائف کا تبادلہ بھی ہوا جس میں؛ مقدس مقام کے میڈیا آفس ڈائریکٹر گریگ بورک کے مطابق عباس نے عیسائیت کے حبر الاعظم کو القدس کے القیامہ چرچ کا ایک (مقدس) پتھر پیش کیا۔

      دریں اثنا ویٹیکن نے اپنے جاری بیان میں "تشدد کے خاتمہ؛ جو کہ شہری آبادی میں ناقابل قبول درد کا باعث ہے، اور ایک منصفانہ وپائیدار حل تک پہنچنے کے لئے فریقین کے مابین براہ راست مذاکرات کی بحالی کے لیے امید کا اظہار کیا۔

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>