امارات اور ہندوستان کے درمیان ایک جامع اسٹریٹجک معاہدہ اور اقتصادی افہام وتفہیم کے میمورنڈم پر دستخط - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعرات, 26 جنوری, 2017
0

امارات اور ہندوستان کے درمیان ایک جامع اسٹریٹجک معاہدہ اور اقتصادی افہام وتفہیم کے میمورنڈم پر دستخط

جمعرات 28 ربيع الثانی 1438 ہجری- 26 جنوری 2017 ء شمارہ نمبر [13939]
3

ہندوستان کے وزیر اعظم نریندڑ مودی ابو ظہبی کے ولی عہد شیخ محمد بن زائد آل نہیان کا نیو دہلی میں استقبال کرتے ہوئے

ابو ظبی: "الشرق الاوسط”

         امارات اور ہندوستان نے کل دار الحکومت نیو دلی میں ایک جامع مشترک اسٹریٹجک معاہدہ اور دونوں ملکوں کے درمیان افہام وتفہیم کے چند میمورنڈم پر دستخط کیا ہے اور جانبین کے درمیان یہ معاہدے ہندوستان کے وزیر اعظم اور ابو ظہبی کے ولی عہد مسلح افواج کے ڈپٹی سپریم کمناڈر  شیخ محمد بن زائد آل نہیان کے درمیان مذاکرات کے لئے ایک  سرکاری میٹنگ کے بعد ہؤئے ہیں۔

        مذاکرات میں تعاون کے تعلقات کو مزید مضبوط کرنے کے طریقوں کے سلسلہ میں غور وفکر کیا گیا ہے اور اسی طرح چند اہم اور مشترکہ علاقائی اور بین الاقوامی مسائل پر بھی غور فکر کیا گیا ہے۔

        مودی نے کہا کہ دونوں ملکوں کے رہنماؤں کے درمیان ہونے والی ملاقاتوں سے ہم محسوس کرتے ہیں کہ جانبین فوری اقدامات کے ذریعہ دو طرفہ تعلقات کو مضبوط بنانے، وسیع کرنے اور آگے بڑھانے کے شوقین ہیں اور اس سے ہمارے اعتماد میں اضافہ ہوا ہے کہ ہم موجودہ اور آئندہ نسلوں کے لئے مفید اور حقیقی اسٹریٹجک پارٹنرشپ قائم کر سکتے ہیں اور پوری امید ہے کہ ہندوستان اور امارات کے یہ تعلقات اس لائق ہونگے کہ ان کو علاقہ اور دنیا میں سب سے اہم، مظبوط اور سب سے زیادہ ترقی یافتہ دو طرفہ تعلق قرار دیا جا سکے۔

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>