شامی حزب اختلاف ڈی مستورا کی دھمکیوں اور کردوں کی شرکت کو مسترد کر رہی ہے - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
کو: جمعرات, 2 فروری, 2017
0

شامی حزب اختلاف ڈی مستورا کی دھمکیوں اور کردوں کی شرکت کو مسترد کر رہی ہے

1485958123246091700_0

حلب کے گاؤں جنرین میں فلیپو گرانڈی دو بچوں کے ساتھ کھیلتے ہوئے، جو گذشتہ ماہ شہر پر گولہ باری کی وجہ سے بے گھر ہو گئے تھے (ا.ف.ب)

 

بيروت: كارولين عاكوم – ابو ظہبی: مساعد الزيانی

      شام کے لئے اقوام متحدہ کے ایلچی سٹیفن ڈی میستورا کی طرف سے ماہ رواں فروری کی 20 تاریخ کو جنیوا میں منعقدہ مذاکرات میں شرکت کے لئے متبادل وفد کو تشکیل دینے کو شامی حزب اختلاف نے دھمکی تصور کیا ہے اور اس کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ اس قسم کے بیانات کسی بھی سیاسی حل تک رسائی کی راہ میں رکاوٹ ہو سکتی ہے۔

      حزب اختلاف اس موضوع کو اقوام متحدہ کے ایلچی کے دائرہ اختیار سے باہر اور سلامتی کونسل کی قرار داد 2254 کے مخالف تصور کرتی ہے۔

جمعرات 6 جمادى الاولیٰ 1438 ہجری ­ 02 فروری 2017ء شمارہ: (13946)

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>