سیاسی منتقلی" سے صرفِ نظر شامیوں میں "جنیوا" سے توقعات میں کمی کا باعث" - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
کو: پیر, 20 فروری, 2017
0

سیاسی منتقلی” سے صرفِ نظر شامیوں میں "جنیوا” سے توقعات میں کمی کا باعث”

news-190217-4

کل میونخ سیکورٹی کانفرنس میں شامی اپوزیشن اتحاد کے سربراہ انس العبدہ (بائیں جانب) اور ان کے دائیں جانب داعش” کے خلاف بین الاقوامی اتحاد کے امریکی ایلچی بریٹ ماک گورک اور پھر روسی خارجہ تعلقات کی کمیٹی کے سربراہ (ا۔ب۔ا)

 

بيروت: كارولين عاكوم

      بین الاقوامی اداروں کی جانب سے "سیاسی منتقلی” کو نظر انداز کرنے کی وجہ سے شامی مخالف جماعتوں کی  آئندہ جنیوا مذاکرات سے توقعات میں کمی واقع ہوئی ہے۔ دریں اثناء شام کے لئے بین الاقوامی نمائندے سٹیفن ڈی میستورا نے کل بیان دیا کہ شام کے سیاسی حل کے لئے روڈ میپ "تمام سیاسی جماعتوں پر مشتمل قابل اعتماد حکومت کے قیام، کسی بیرونی جماعت کی مداخلت کے بغیر شامیوں کی طرف سے نئے آئین کی تشکیل اور شامی پناہ گزینوں کی شرکت کے ساتھ اقوام متحدہ کی زیر نگرانی انتخابات کرانے پر مشتمل ہے”۔

      شامی اپوزیشن اتحاد کے سربراہ انس العبدہ نے ٹیلی ویژن کو انٹرویو دیتے ہوئے مذاکرات کے دوران پیش رفت کی توقعات میں کمی پر تشویش کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ شامی حکومت اور اس کے اتحادی بحران کے سیاسی حل تک رسائی کے بارے میں غیر سنجیدہ ہیں۔ انہوں نے "میونخ سیکورٹی کانفرنس” میں شرکت کے دوران اس بات پر زور دیا کہ "مخالف جماعتیں جنیوا امن مذاکرات پر کاربند ہیں، جس میں درحقیقت اقتدار کی منتقلی کی راہ ہموار کی جانی چاہئے تھی۔

پیر­ 24 جمادى الاول 1438 ہجری ­ 20 فروری 2017 ء  شمارہ: (13964)
شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>