عراقی افواج کی موصل ائیر پورٹ کی جانب پیش قدمی - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 21 فروری, 2017
0

عراقی افواج کی موصل ائیر پورٹ کی جانب پیش قدمی

ہم تمہارے تیل کو ہرگز نہیں لوٹیں گے : بغداد سے میٹس
1487615325691261300

کل جنوبی موصل میں جھڑپوں کے دوران زخمی ہونے والے ایک عراقی فوجی کو اس کے ساتھی امداد دے رہے ہیں (ا۔ف۔ب)

 

اربيل: دلشاد عبد اللہ

      کل عراقی افواج نے موصل شہر کے دائیں حصے کو آزاد کرانے کی کاروائی کے دوران دوسرے روز بھی ائیر پورٹ کے علاقے میں جنگ جاری رکھی۔

      فوجی ذرائع نے "الشرق الاوسط” سے بات کرتے ہوئے کہا کہ سکیورٹی فورسز نے ائیر پورٹ کے مضافاتی گاؤں البوسیف کو دوبارہ حاصل کر لیا ہے۔ ذرائع نے نشاندہی کی کہ جھڑپوں کے دوران "داعش” نے جان بوجھ کر سڑکوں اور عمارتوں کو تباہ کرنے کے لئے بارود سے بھری گاڑیوں اور خودکش بمباروں کا استعمال کیا، اسی طرح فوج کے حملوں کو پسپا کرنے کے لئے موٹر سائیکلوں کا استعمال کیا۔ ذرائع نے مزید کہا کہ "اب ہم موصل ائیر پورٹ اور الغزلانی کیمپ کی جانب پیش قدمی کر رہے ہیں”۔

      دوسری طرف کل بغداد سے امریکی وزیر دفاع "جیمز میٹس” نے یقین دہانی کی کہ ریاست ہائے متحدہ امریکہ عراقی تیل کے ذخائر پر لوٹ مار کرنے کی کوشش نہیں کر رہا ہے۔ انہوں نے یہ بات صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے متنازعہ بیانات پر عراقی کمپنیوں کے خدشات میں کمی لانے کی کوشش میں کہی، جس میں صدر نے اس بات پر زور دیا کہ واشنگٹن کو چاہئے تھا کہ 2011 میں عراق سے فوجی انخلاء سے پہلے اس کے تیل پر قبضہ کر لیتا۔ میٹس نے کہا کہ "عام طور پر ہم امریکہ میں گیس اور تیل کے لئے ادائیگی کرتے ہیں اور مجھے یقین ہے کہ مستقبل میں بھی ایسا ہی کریں گے۔۔۔ ہم عراق میں کسی کے تیل پر قبضہ کرنے کے لئے نہیں بیٹھے ہیں”۔

منگل 25 جمادى الاول 1438 ہجری ­ 21 فروری 2017 ء  شمارہ: (13965)
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>