ایرانی مداخلت اور خطے کے بحران عرب سربراہی اجلاس کے سامنے - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: اتوار, 26 مارچ, 2017
0

ایرانی مداخلت اور خطے کے بحران عرب سربراہی اجلاس کے سامنے

1490467660022974500

مندوبین کی سطح پر عرب لیگ کے اجلاس کے سیشن کا ایک منظر… اور عرب لیگ کے سیکرٹری جنرل احمد ابو الغیط بھی اس میں واضح ہیں (پیٹرا)

 

بحر الميت: سوسن ابو حسين – محمد الدعمہ

     شیڈول کے مطابق آئندہ بدھ کے روز عرب سربراہی اجلاس کی تیاری کے ضمن میں کل مندوبین کی سطح کا اجلاس منعقد کیا گیا۔ اس دوران مجوزہ ایجنڈے کا جائزہ لیا گیا اور دہشت گردی و قومی سلامتی سے متعلق پالیسیوں اور سکیورٹی کی کئی ایک فائلوں سمیت عرب ممالک کے علاقائی وبین الاقوامی تعلقات کا بھی جائزہ لیا گیا۔

      عرب لیگ کے سیکرٹری جنرل احمد ابو الغیط کے ترجمان محمود عفیفی نے کہا کہ سیکرٹری جنرل سربراہان کو تین رپورٹیں پیش کریں گے، جن میں سرفہرست مسٔلہ فلسطین میں پیش رفت اور شام، لیبیا اور یمن کے بحرانوں کے حل، علاقائی مداخلت پر بات کرتے ہوئے عرب ممالک کے اندرونی معاملات میں ایران کی مداخلت کی جانب بھی اشارہ کیا گیا۔ علاوہ ازیں عرب خطے سے ایٹمی ہتھیاروں اور بڑے پیمانے پر تباہی پھیلانے والے دیگر ہتھیاروں کے انخلاء کے موضوع پر بھی بات کی گئی۔

اتوار 27 جمادى الثانی 1438 ہجری ­ 26 مارچ 2017ء  شمارہ: (13998)
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>