الفقہا کے قتل پر اسرائیل کی خاموشی - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: اتوار, 26 مارچ, 2017
0

الفقہا کے قتل پر اسرائیل کی خاموشی

1490480597954138700

  مازن الفقہا

 

رام الله: كفاح زبون

      اسرائیل نے خاموشی سے "حماس” کے الزام کو قبول کیا ہے کہ اس نے ان کی ” كتائب القسام” (نامی ضمنی جماعت) کی ایک اہم قیادت مازن الفقہا کو پرسوں غزہ میں قتل کر دیا ہے۔ مسلح افراد نے غزہ کے جنوب مغربی علاقے تل الہوا نامی محلے میں الفقہا پر ان کے گھر کے سامنے فائرنگ کر دی جس سے پسٹل کی چار گولیاں ان کے سر میں لگیں اور وہ موقع پر ہی جان بحق ہوگئے۔ جبکہ مسلح افراد فرار ہونے میں کامیاب رہے کیونکہ کہا جاتا ہے کہ فائرنگ سائلینسر پسٹل سے کی گئی۔

      اسرائیل اس واقعے پر تبصرہ نہیں کیا ہے، اور اسرائیلی فوج کے ترجمان کی جانب سے تبصرہ کرنے سے انکار کیا گیا ہے۔ لیکن اسرائیلی ذرائع ابلاغ نے الفقہا پر الزام عائد کرتے ہوئے اشارہ کیا ہے کہ سنہ 2002 میں اسرائیل میں ایک بس پر بم حملہ کرنے کی ذمہ داری ان پر عائد ہوتی ہے جس کے نتیجے میں 9 اسرائیلی کی ہلاک ہو گئے تھے۔ چنانچہ اسرائیل نے سنہ 2003 میں اس الزام کی بنیاد پر الفقہا کو قید کیا اور 9 بار سزا سنائی۔

 

اتوار 27 جمادى الثانی 1438 ہجری ­ 26 مارچ 2017ء  شمارہ: (13998)
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>