برطانیہ کا یورپ کے ساتھ "بڑی منسوخی" کا اعلان - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق الاوسط
کو: جمعہ, 31 مارچ, 2017
0

برطانیہ کا یورپ کے ساتھ "بڑی منسوخی” کا اعلان

قانون کی شق19 الف ہدف پر — اور 60 ملیار یورو کی رصید اگلا معرکہ
1490878939902484300

سنہ 1967 کی ارشیف تصویر جس میں برطانوی وزیر اعظم ہیرالڈ ولسن اور فرانسیسی صدر ڈیگال؛ جنہوں نے برطانیہ کی یورپی سنگل مارکیٹ میں شمولیت کے خلاف ویٹو کا حق استعمال کیا اور حتی کہ 1973 میں ڈیگال کی وفات کے بعد تک اس کی شمولیت میں تاخیر رہی (ا۔ب)

 

لندن – برسلز : "الشرق الاوسط”

     کل برطانوی حکومت نے ایک "عظیم منسوخی” کے عنوان سے ایک بل کی منظوری کو شائع کیا ہے، جو سنہ 1972 کی ایک قانونی شق کو دور کرنے کے لئے ہے، جس کے مطابق برطانوی قانون میں یورپی قانون سازی کو ضم کرنے کی اجازت دی گئی تھی۔ "سفید کتاب” کی اشاعت سے تھریسا مے کی حکومت کا مقصد یورپی قانون سازی کو ختم کر کے ملکی قوانین میں تبدیل کرنا ہے۔ جس میں مفید قوانین کو باقی رکھ کر اس کے علاوہ باقی قوانین کو ختم کر دیا جائے گا۔

     پرسوں مے نے ہاؤس آف کامن کے سامنے اس بات کی تصدیق کی کہ "یہ اقدام اس طریقہ کار کی وضاحت کرتا ہے جس کے تحت ہم یورپی عدالت کی اہم دفعات کو منتقل کریں گے”۔ شاید یہ عمل عدلیہ کی سطح پر اندھیرے میں چھلانگ لگانے کے مترادف ہو، خاص طور سے یورپی قانون جو 19 الف کے بارے میں ہے اسے برطانیہ میں لاگو کیا جائے گا۔

جمعہ 3 رجب 1438 ہجری­ 31 مارچ 2017ء   شمارہ:  (14003)
شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>