"دو گرجا گھروں کے قتل عام" میں مصر خون آلود - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
کو: پیر, 10 اپریل, 2017
0

"دو گرجا گھروں کے قتل عام” میں مصر خون آلود

"داعش” کی طرف سے قبول کردہ دو خودکش دھماکوں میں 44 ہلاکتیں اور 126 زخمی – پوپ تواضروس محفوظ اور سیسی کی طرف سے ایمر جنسی کے نفاذ کا اعلان
news-090417-1

تفتیش کاروں کل طنطا کے چرچ "میری گرگس” کے اندر ثبوتوں کا جائزہ لیتے ہوئے (ا۔ب۔ا)…فریم میں اسکندریہ چرچ پر بم دھماکے کے بعد قبطی چرچ کے انفارمیشن آفس کی طرف سے تقسیم کردہ پوپ تواضروس کی تصویر

 

قاہرہ: محمد عبده حسنين – وليد عبد الرحمن

      کل مصر کے دو گرجا گھروں میں ہونے والے دھماکوں میں کم سے کم 44 افراد ہلاک اور 126 زخمی ہوگئے۔ تنظیم داعش نے ان دونوں خودکش دھماکوں کی ذمہ داری قبول کر لی ہے۔ یاد رہے کہ ایسا شام میں ادلب کے علاقے خان شیخون پر شامی حکومت کی جانب سے مخالفین پر کیمیائی حملے کے جواب میں بین الاقوامی تائید کے ساتھ امریکہ کی طرف سے العشیرات ایئر پورٹ کو نشانہ بنانے کے دو روز کے بعد اور مصر کے صدر عبد الفتاح سیسی کے واشنگٹن کے دورہ کے 5 روز کے بعد جبکہ پوپ فرنسیس کا مصر کے دورہ کرنے سے 3 ہفتے پہلے ہوا ہے۔

      گورنریٹ الغربیہ کے شہر طنطا کے چرچ "میری گرگس” اور اسکندریہ کے مرقسیہ چرچ کو حملوں میں نشانہ بنانے کے پر صدر سیسی نے ملک کو محفوظ بنانے کے لئے فوج کو طلب کر لیا ہے اور ملک میں تین ماہ کے لئے ایمرجنسی نافذ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

      مصری وزارت صحت کے تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق "میری گرگس” چرچ میں ہونے والے دھماکے سے 27 عام شہری ہلاک اور دیگر 78 زخمی ہوگئے، جن میں 8 کی حالت انتہائی تشویشناک ہے۔ جبکہ اسکندریہ کے مرقسیہ چرچ میں پوپ تواضروس دوم کی موجودگی میں ہونے والے دھماکے میں 4 پولیس کے افراد سمیت 17 افراد ہلاک اور 48 زخمی ہوگئے۔ دھماکوں کے بعد قطبی چرچ نے یقین دہانی کی کہ "پوپ خیریت سے ہیں”۔

      ان دھماکوں کے بعد عرب اور بین الاقوامی سطح پر ان کی مذمت کی گئی۔ چنانچہ خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز نے مصری صدر کو تعزیتی پیغام بھیجا، جس میں یقین دہانی کی گئی کہ مملکت سعودیہ مصر اور اس کی عوام کے ساتھ ہے۔ جبکہ سعودی وزارت خارجہ کے سرکاری ذریعے نے ان "بزدلانہ دہشت گرد کارروائیوں کو مذہبی اصولوں اور اخلاقی و انسانی اقدار کے خلاف قرار دیا ہے”۔

      بین الاقوامی سطح پر، امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے "ٹویٹ” کیا کہ "مصر میں ہونے والے حملے پر بہت دکھ ہوا اور ریاست ہائے متحدہ امریکہ اس کی بھرپور مذمت کرتا ہے”۔ اسی طرح یورپی یونین نے بھی دہشت گردی کے خلاف جنگ میں مصری حکومت اور عوام کے ساتھ اپنی یکجہتی کا اظہار کیا۔ کل شام عالمی سلامتی کونسل نے ان (حملوں) کی مذمت کرتے ہوئے اسے "بھیانک امر” قرار دیا۔

      کل ملک میں ہونے والے دھماکوں کے باعث مصری اسٹاک مارکیٹ میں مندی رہی، جبکہ مشرق وسطی کی اکثر دیگر اسٹاک مارکیٹس میں بھی کمی رہی۔ جبکہ سیاسی کشیدہ صورت حال سرمایہ کاروں کے جذبات پر اثر انداز رہی۔

 

پیر 13 رجب 1438 ہجری­ 10 اپریل 2017ء  شمارہ: (14013)
شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>