حکمت یار کا طالبان سے ہتھیار ڈال دینے کا مطالبہ - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: اتوار, 30 اپریل, 2017
0

حکمت یار کا طالبان سے ہتھیار ڈال دینے کا مطالبہ

44

کل افغانستان کی دار الحکومت کابل کے مشرق میں واقع لقمان علاقہ میں افغانستان جنگ کے ایک نمایاں رہنماء قلب الدین حکمت یار نے اپنے حامیوں کے سامنے طالبان کو جنگ بند کر کے امن وسلامتی پر مبنی کام میں شریک ہونے کی دعوت دیتے ہوئے

واشنگٹن: محمد علی صالح

        افغانستان میں جنگ کے ایک نمایاں رہنماء قلب الدین حکمت یار نے حکومت کےساتھ امن معاہدہ کرنے کے بعد طالبان تحریک کو ہتھیار ڈال کر جنگ بند کر دینے اور مذاکرات کرنے کی دعوت دی ہے۔

        کل حکمت یار نے کابل میں اپنے حامیوں اور افغانستان کے سیاستدانوں کی بڑی تعداد کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں آپ لوگوں کو سلامتی کے قافلہ میں شامل ہونے اور اس جنگ کو بند کرنے کی دعوت دیتا ہوں جس کا کوئی فائدہ نہیں ہے۔ میں افغانستان کو آزاد، مستقل قابل فخر اور ایک اسلامی ملک کی شکل میں دیکھنا چاہتا ہوں۔

اتوار 4 شعبان 1438ہجری –  30 اپریل  2017ء شمارہ نمبر {14033}

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>