ماسکو کی شام میں "پرامن علاقوں" کے بارے میں واشنگٹن پر سبقت - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
به قلم:
کو: منگل, 2 مئی, 2017
0

ماسکو کی شام میں "پرامن علاقوں” کے بارے میں واشنگٹن پر سبقت

1493658088675034800

کل دمشق کے مشرقی الغوطہ میں حموریہ شہر پر فضائی بمباری کے بعد ایک شاہراہ میں تباہی کا منظر (ا.ف.ب)

 

بيروت: ثائر عباس – بولا اسطيح

      روس نے شامی مخالف جماعتوں اور ان کے اتحادیوں کو علیحدہ فورسز کے ساتھ "پرامن علاقوں” کی تجویز دے کر سب کو حیران کر دیا ہے۔ جیسا کہ آستانہ کانفرنس کے تمہیدی اجلاس میں ماسکو کی جانب سے پیش کی گئی دستاویز کے مطابق "مخالف جماعتوں” کی حمایت کے ساتھ "داعش” اور "نصرت فرنٹ” دونوں  تنظیموں کو شامی علاقوں سے نکالنے کے لئے معرکۂ "خروج” کے آغاز کا عندیہ دیا گیا ہے۔ اس اجلاس میں شامی مخالف جماعتوں کی شرکت بنیادی رہی جن میں "آزادیٔ شام” کی تحریک بھی شامل تھی۔ اس دوران؛ کانفرنس میں شرکت کرنے والی، 15 مخالف مسلح جماعتوں نے پیش کردہ تجویز پر "ابتدائی رضامندی” کا اظہار کیا ہے۔ مگر انہوں نے علیحدہ فورسز میں ایران کی شرکت کے امکان کے بارے میں وضاحت کا مطالبہ کیا ہے۔ علاوہ ازیں اس منصوبہ بندی میں مذکورہ علاقوں کی سرحدی لائنوں  کی تقسیم بھی شامل ہے، جبکہ ضامن ممالک کی افواج کی تعیناتی کے امکان کے ساتھ جنگ کے خاتمے کو یقینی بنایا جائے گا۔

منگل 6 شعبان 1438 ہجری­ 02 مئی 2017ء  شمارہ: (14035)
شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>