قطر کے حمایت یافتہ دہشت گرد نیٹ ورکس کے خلاف ایکشن - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعہ, 9 جون, 2017
0

قطر کے حمایت یافتہ دہشت گرد نیٹ ورکس کے خلاف ایکشن

                    کل قاہرہ میں مصر کے صدر اور بحرینی فرمان روا کو گارڈ آف آنر پیش کیا جا رہا ہے

 

قاہرہ: وليد عبد الرحمن

      کل سعودی عرب، مصر، متحدہ عرب امارات اور بحرین نے قطر کی طرف سے حمایت یافتہ شخصیات اور دہشت گرد نیٹ ورکس کے خلاف سخت اقدامات کا فیصلہ کیا ہے۔

      چاروں ممالک نے ایک بیان میں کہا ہے کہ کالعدم دہشت گردوں کی فہرست میں شامل 59 شخصیات اور 12 ادارے ایسے ہیں جو کہ قطر سے منسلک ہیں۔ جبکہ یہ اقدامات "دہشت گردی کے خلاف جنگ اور انہیں فنڈنگ کرنے والے ذرائع کو ختم کرنے نے ضمن میں ہیں۔۔۔ اور دوحہ حکام کی جانب سے کئے گئے معاہدوں اور یقین دہانی کے بعد ان کی مسلسل خلاف ورزی پر یہ قدم اٹھایا گیا ہے، جس کے مطابق دوحا کسی عناصر کو اور تنظیم کو امداد یا پناہ نہیں دے گا جو ممالک کے لئے خطرے کا باعث بنے”۔

      اس فہرست میں خلیجی اور مختلف عرب ممالک کی شخصیات کے نام درج ہیں، جن میں سرفہرست یوسف قرضاوی (مصری)، عبد الحکیم بلحاج (لیبی)، حجاج العجمی (کویتی) اور عبد اللہ آل ثانی (قطری) شامل ہیں، جبکہ اداروں میں "قطر رضاکارانہ سینٹر”، "دوحہ ابل کمپنی”، قطر خیرات” اور "شیخ عید آل ثانی چیریٹی فاؤنڈیشن” شامل ہیں۔

جمعہ 14 رمضان المبارک 1438 ہجری­ 09 جون 2017ء  شمارہ: (14073)
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>