لندن کی مسجد "کچلنے والی دہشت گردی" کا نشانہ - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 20 جون, 2017
0

لندن کی مسجد "کچلنے والی دہشت گردی” کا نشانہ

            برطانوی وزیر اعظم ٹریزا مئے کل لندن میں فینزبری پارک کی مسجد کے دورے کے دوران (رویٹرز)

 

لندن: "الشرق الاوسط”

      برطانیہ نے کچلے جانے کے حادثہ کے بعد مساجد کے گرد سیکورٹی انتظامات سخت کر دیئے ہیں۔ اس حادثہ میں اتوار کی شب شمالی لندن کے فینزبری پارک کی مسجد کے قریب نمازیوں کو نشانہ بنایا گیا جس میں دو افراد جان بحق اور دس افراد زخمی ہوگئے تھے۔

      کل مسجد کے دورہ کے دوران برطانوی وزیر اعظم ٹریزا مئے نے اپنے عزم کا اظہار کیا کہ وہ دہشت گردی اور انتہا پسندی کے خلاف جدوجہد جاری رکھیں گی، "اگرچہ ان کا ذمہ دار کوئی بھی ہو”۔ انہوں نے کہا کہ اس حملے سے معلوم ہوتا ہے کہ دہشت گردی، انتہا پسندی اور نفرت کی کئی شکلیں ہو سکتی ہیں۔ خواہ ان کا ذمہ دار کوئی بھی ہو ان سے نمٹنے کے لئے ہمارا عزم ایک ہی ہونا چاہیے”۔ انہوں نے یقین دہانی کی کہ پولیس مساجد کی حفاظت کے لئے ہر طرح کا ضروری اضافی تحفظ فراہم کرے گی۔

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>