سعودی لوگ ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان سے بیعت کر رہے ہیں - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعرات, 22 جون, 2017
0

سعودی لوگ ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان سے بیعت کر رہے ہیں

سب سے پہلے محمد بن نايف نے بیعت کی… اور مفتی کا اس فیصلہ کو "ریاست کے وجود کی حفاظت” سے تعبیر… اور ٹرمپ کا مبارکبادی کے لئے رابطہ

ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان مفتی اعظم شيخ عبد العزيز آل شيخ (بائیں جانب) سینئر علماء کونسل کے رکن شيخ صالح الفوزان کے درمیان بیٹھے ہیں

 

مکہ مکرمہ: "الشرق الاوسط”

کل نئے شاہی فرمان کے مطابق شہزادہ محمد بن سلمان کو بطور ولی عہد تقرر کئے جانے کے بعد سعودی افراد نے ان کی بیعت کرنا شروع کر دی ہے۔

کل رات نماز تراویح کے بعد صفا پیلس میں ملک کے بانی بادشاہ کے دونوں شہزادوں عبد الالہ بن عبد العزیز اور مقرن بن عبد العزیز نے خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز کے فیصلہ کر مانتے ہوئے ان کی بعت کی۔ اسی طرح مملکت کے مفتی اعظم شیخ عبد العزیز آل شیخ اور سینئر علماء کونسل کے اراکین نے بھی بیعت کی، اس دوران شہزادے ، وزراء، شوری کونسل کے اراکین، قبائلی سردار اور عام شہری جمع تھے۔ اس دوران مفتی اعظم نے خطاب کرتے ہوئے اس نئے شاہی فرمان کو "ملک کی حفاظت سے تعبیر کیا”۔۔۔

امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے شہزادہ محمد بن سلمان سے ٹیلی فونک رابطے کیا اور ولی عہد کا منصب سنبھالنے پر مبارکباد پیش کی۔ علاوہ ازیں قطر اور اس کے ہمسایہ ممالک کے مابین سفارتی اختلافات پر بھی تبادلۂ خیال کیا جن میں سعودی عرب بھی شامل ہے۔

جمعرات 27 رمضان المبارک 1438 ہجری­ 22 جون 2017ء شمارہ: (14086)
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>