چاروں ممالک قطر کے جواب کا جائزہ لے رہے ہیں - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 4 جولائی, 2017
0

چاروں ممالک قطر کے جواب کا جائزہ لے رہے ہیں

کویت کے امیر نے کل کویت میں امیرِ قطر کا خط قطری وزیر خارجہ سے وصول کرتے ہوئے (ا.ف.ب)

 

جدہ: سعيد الابيض

      سعودی عرب کے وزیر خارجہ عادل الجبیر نے یقین دہانی کی ہے کہ کل کویت کے وساطت سے سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین اور مصر کے مطالبات کے بارے میں قطر کا سرکاری جواب موصول ہوا ہے، "جس کا باریک بینی سے جائزہ لیا جا رہا ہے پھر اس پر ضروروی اقدامات کئے جائیں گے”۔

      جدہ میں جبیر نے اپنے جرمن ہم منصب زیگمار جبرائیل کے ہمراہ پریس کانفرنس کے دوران امید ظاہر کی کہ "مطالبات پر برادر ملک قطر کا جواب مثبت ہوگا تاکہ بحران کے حل تک پہنچا جا سکے”۔ انہوں نے زور دیتے ہوئے کہا کہ چاروں ممالک قطر کے ساتھ اچھے تعلقات قائم رکھنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے نشاندہی کہ کہ چار ممالک کی جانب سے قطر کے خلاف کئے جانے والے اقدامات کا مقصد دوحہ کی پالیسیوں کو تبدیل کرنا ہے، جسے ہم "قطر، خطے کے ممالک اور پوری دنیا کے لئے غلط تصور کرتے ہیں”۔۔۔

      دوسری جانب امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے موجودہ بحران پر تبادلۂ خیال کے لئے خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز، ابوظہبی کے ولی عہد شیخ محمد بن زاید اور قطر کے امیر شیخ تمیم بن حمد آل ثانی سے ٹیلی فونک رابطہ قائم کیا۔ امریکی صدر نے  خطے میں "وحدت” کی اہمیت پر زور دیا تاکہ گذشتہ مئی میں ریاض کی میزبانی میں ہونے والی اسلامی – امریکی سربراہی کانفرنس کے مقاصد حاصل کئے جا سکیں۔ انہوں نے اشارہ کیا کہ اس کانفرنس کی اولین ترجیحات میں دہشت گردی کے لئے فنڈنگ کو روکنا تھا۔

منگل – 10 شوال 1438 ہجری – 04 جولائی 2017ء  شمارہ: (14098)
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>