رنگوں اور پھولوں میں ڈوبے مکہ مکرمہ کے عوامی محلے - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: ہفتہ, 8 جولائی, 2017
0

رنگوں اور پھولوں میں ڈوبے مکہ مکرمہ کے عوامی محلے

"شباب الفانوس” نامی رضاکاروں کا پورے شہر کو رنگ روغن کرنے کا خواب

"شباب الفانوس” کے رضاکار مکہ مکرمہ کے محلوں کو سجاتے ہوئے

 

لندن: عبير مشخص

      مکہ مکرمہ کے عوامی محلے رنگوں اور پھولوں کے ساتھ مزین کئے گئے اور عربی تحریروں کے ذریعے رہائشی افراد کو عید کی مبارکباد دی گئی۔ رضاکاروں کے ایک گروپ؛ جنہوں نے اپنا نام "شباب الفانوس (چراغ نما نوجوان)” رکھا ہے، انہوں نے گذشتہ چار سالوں میں مسلسل اپنے محلوں کی جمالیاتی روح کو زندہ کرنے کے ان کی تزین و آرائش کی اور رنگ وروغن کیا۔ ان کا کہنا ہے کہ "ہم چاہتے ہیں کہ لوگوں کے دلوں میں خوشی اور مسرت پیدا کریں اور اسی دوران ہم اپنی توانائیوں کو مفید چیزوں میں استعمال کر رہے ہیں”۔

      اس گروپ کے بانی عبداللہ البنی؛ جنہوں نے مکہ مکرمہ کے رہائشیوں کی خدمت کے لئے رضاروں کا ایک گروپ تشکیل دیا ہے، انہوں نے "الشرق الاوسط” کو "شباب الفانوس” کے ابتدائی دور کے بارے میں بتایا کہ "موسم گرما کی چھٹیوں کے دوران نوجوانوں کے مشغول رکھنے کے لئے قائم کردہ مراکز میں ہمیں ایک دوسرے سے تعارف ہوا، اور چھٹیوں کے اختتام پر ہم نے مل کر سوچا کہ معاشرتی خدمت کے لئے رضاکارانہ طور پر مل کر کام کرنا چاہئے”۔

ہفتہ – 14 شوال 1438 ہجری – 08 جولائی 2017ء  شمارہ: (14102)
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>