امریکہ زیادہ تر عملی ہے اور اسرائیل شام کے جنوب میں جنگ بندی کا حصہ ہے : پوٹن - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: اتوار, 9 جولائی, 2017
0

امریکہ زیادہ تر عملی ہے اور اسرائیل شام کے جنوب میں جنگ بندی کا حصہ ہے : پوٹن

پوٹن کل ہمبرگ میں پریس کانفرنس کے دوران (ا.ب.ا)

 

ہمبرگ – ماسکو – لندن: "الشرق الاوسط”

      روس کے صدر ولادی میر پوٹن نے کل ہمبرگ میں گروپ 20 سربراہی اجلاس کے اختتام پر کہا کہ شام کے جنوب میں آج سے متوقع طور پر شروع ہونے والی جنگ بندی اس وجہ سے ہوئی ہے کیونکہ امریکی مؤقف "زیادہ تر عملی” ہے، انہوں نے نشاندہی کی کہ اسرائیل بھی اس جنگ بندی کا حصہ ہے۔

      پوٹن نے انکشاف کیا ہے کہ انہوں نے امریکہ کے ساتھ شام کے جنوب مغرب میں جنگ بندی کے بارے میں باہمی مفاہمت تک رسائی حاصل کر لی ہے، اور اس میں اردن اور اسرائیل بھی شامل ہیں۔ انہوں نے یقین دہانی کی ہے کہ "شام کی سرزمین کی وحدت کو محفوظ بنانے کی ضرورت ہے۔ چنانچہ اس ضمن میں دمشق کی مرکزی حکومت کے ساتھ تعاون کا عمل جاری ہے تاکہ شام میں جامع تصفیہ تک رسائی حاصل کی جا سکے”۔

اتوار – 15 شوال 1438 ہجری – 09 جولائی 2017ء  شمارہ: (14103)
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>