عراق میں فرانس کی طرف سے داعش کے بعد کی تیاری - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: اتوار, 27 اگست, 2017
0

عراق میں فرانس کی طرف سے داعش کے بعد کی تیاری

کل تلعفر میں داعش جنگجوؤں اور عراقی فورسز کے درمیان جنگوں کا ایک منظر

پیرس: میکائل ابو نجم

        عراقی فوجی ذرائع نے اطلاع دی ہے کہ کل فرانس کے وزیر دفاع اور وزیر خارجہ جان ایف لودریان اور فلورنس پارلی بغداد میں اترے پھر وہ دونوں وہاں سے کردستان علاقہ کی دار الحکومت اربیل روانہ ہو گئے اور یہ دورہ داعش کے بعد کے مرحلہ کی اس تیاری کے لئے فرانسیسی کوشش کے دائرہ میں ہوا ہے جسے تلعفر میں زبردست شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

        عراقی وزیر خارجہ کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس میں لودریان نے اپنے ملک کے ارادہ کا انکشاف یہ کہتے ہوئے کیا ہے کہ ہم جنگ میں موجود ہیں اور عنقریب جنگ کے علاوہ امن وسلامتی میں بھی موجود رہیں گے۔ باخبر فرانسیسی ذرائع نے کہا ہے کہ پیرس عراق کے اندر گزشتہ تین سالوں میں کی گئی کھیتی کا سرمایہ کاری، اقتصادی اور سیاسی فائدے حاصل کرنا چاہتا ہے اور اس کے مستقبل کا ارادہ بغداد کے ساتھ ہر سطح پر بہت ہی مضبوط اور طاقتور تعلق قائم کرنا ہے۔

اتوار– 5 ذی الحجة 1438 ہجری – 27 اگست 2017ء  شمارہ نمبر: (14152)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>