تلعفر کے بعد العیاضیہ نینوی میں "داعش" کا آخری ٹھکانہ - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 29 اگست, 2017
0

تلعفر کے بعد العیاضیہ نینوی میں "داعش” کا آخری ٹھکانہ

کل (شمالی تلعفر) کے علاقے العیاضیہ پر حملے کے دوران عراقی فوجی (رویٹرز)

 

اربيل: "الشرق الاوسط”

      تلعفر سے نکالے جانے کے بعد مسلح "داعش” کے سینکڑوں عناصر؛ جن میں اکثر عرب اور ٖغیر ملکی ہیں، انہوں نے شمالی جانب العیاضیہ گاؤں کی جانب رخ کر لیا ہے۔ یہ گورنریٹ نینوی میں ان کا آخری ٹھکانہ ہے اور اسے بھی عراقی افواج نے کل گھیرے میں لے لیا ہے۔

      عراقی فوج کے 15 ویں ڈویژن کے 92 ویں بریگیڈ میں دوسری ریجنٹ کے کمانڈر لیفٹیننٹ کرنل ریبوار عزیز نے "الشرق الاوسط” سے بات کرتے ہوئے کہا: "العیاضیہ میں فوجی یونٹس مسلح تنظیم کے ساتھ سخت جنگ کر رہے ہیں اور ہم نے اس کے اطراف میں واقع تمام گاؤں ان کے قبضے سے آزاد کرا لئے ہیں۔ فی الحال ہماری فوجی یونٹس گاؤں کے مرکز کی جانب بڑھ رہی ہیں”۔ چنانچہ اب تنظیم کے مسلح عناصر کے سامنے ہتھیار ڈالنے یا مرنے کے سوا اور کوئی راستہ نہیں ہے۔

 

منگل – 7 ذی الحجة 1438 ہجری – 29 اگست 2017ء  شمارہ: [14154]
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>