اربیل میں امریکی "داعش" اور "قیمتی شکار" زیر تحقیق - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
غسان شربل
به قلم:
کو: جمعرات, 31 اگست, 2017
0

اربیل میں امریکی "داعش” اور "قیمتی شکار” زیر تحقیق

"الشرق الاوسط” کی کردی جیلوں میں تنظیم کے عراقی اور شامی عناصر سے گفتگو

 

اربيل:غسان شربل

      تنظیم داعش کی کہانی ابھی تک نہیں لکھی گئی یہ ایک خوفناک، پیچیدہ اور خطرناک کہانی ہے۔ لیکن اس کہانی کے کچھ حصے واضح ہوئے ہیں جو کہ جیلوں میں قید تنظیم کے افراد پر جاری تحقیق سے سامنے آئے ہیں، جیسے کہ اربیل میں انسداد دہشت گردی کا مرکز ان میں شامل ہے۔

      اس بارے میں تحقیق کے لئے "الشرق الاوسط” نے عراق میں واقع ایک ہیڈکوارٹر (المقر) کا دورہ کیا، جہاں غیر معمولی گارڈ اور سیکیورٹی کا طریقہ کار تھا۔ المقر جیل میں "داعش” کے سینکڑوں عناصر تحقیقات کے تحت قید ہیں تاکہ انہیں ان کے ملک واپس کرنے یا انہیں صوبائی عدالتوں میں پیش کرنے سے پہلے ابتدائی تحقیق  کے ضمن میں ہے۔ عراقیوں کے مطابق گرفتار شدہ عناصر میں بھاری اکثریت غیر ملکیوں کی ہے۔ جبکہ انہی گرفتار شدہ "داعش” کے عناصر میں 3 امریکی بھی ہیں، جو کہ الیکٹرانک کے شعبہ میں مہارت رکھتے ہیں۔ حال ہی میں ایک "نئی قیمتی گرفتاری” سامنے آئی ہے جو میں ایک غیر عربی عراق سے شام جا رہا تھا اور وہ زمینی راستے کا ماہر تھا۔ جبکہ المقر میں فرانسیسی بھی آئے تھے جنہیں ان کی حکومت کو واپس کر دیا گیا ہے، اسی طرح کئی ایک سوئیڈش افراد کو بھی انکی حکومت کو واپس کر دیا گیا ہے  اور حال ہی میں روس اور چچنیا سے اس بارے میں بات چیت جاری ہے۔  (تلخیص)

 

جمعرات – 9 ذی الحجة 1438 ہجری – 31 اگست 2017ء شمارہ: [14156]
شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>