روہنگا کے مصائب کو ختم کرنے کے لئے سو چی پر بین الاقوامی دباؤ - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: ہفتہ, 9 ستمبر, 2017
0

روہنگا کے مصائب کو ختم کرنے کے لئے سو چی پر بین الاقوامی دباؤ

ایک روہنگیا بچی اپنی چھوٹی بہن کو گود میں لے کر کل بنگلہ دیش ٹیکناف علاقہ سے داخل ہوتی ہوئی

جنیوا – لندن: "الشرق الاوسط”

         کل میانمار کی صدر خاتون اون سان سو چی پر روہنگیاں مسلمانوں کی مصیبت کو ختم کرنے کے لئے بین الاقوامی دباؤ بہت زیادہ ہو چکا ہے اور ان مسلمانوں کے بارے میں اقوام متحدہ نے کہا کہ 270 ہزار افراد اپنے خلاف کئے جانے والے ظلم وزیادتی اور شدت پسندی کی وجہ سے بنگلہ دیش کی طرف فرار ہو چکے ہیں اور امید یہ کی جا رہی ہے کہ 300 ہزار تک ان کی تعداد پہنچ جائے گی۔

        کل امن وسلامتی سے متعلق ایوارڈ کے لئے انتخاب کرنے والی کمیٹی کے جنرل سیکریٹری نے جرمن نیوز ایجنسی سے کہا کہ روہنگا مسلمانوں کے سلسلہ میں امن وسلامتی ایوارڈ حاصل کرنے والی سو چی کا رد فعل قابل تشویش ہے اور اس نے ساری امیدوں پر پانی پھیر دیا ہے اور اس خاتون نے تو اس مسئلہ کو حل کرنے کے لئے کوئی کوشش نہیں کی ہے۔

ہفتہ – 18 ذی الحجہ 1438 ہجری مطابق 09 ستمبر 2017 ء شمارہ نمبر: (14165)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>