صالح کا خون حوثیوں کو تنہا کر رہا ہے - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 5 دسمبر, 2017
0

صالح کا خون حوثیوں کو تنہا کر رہا ہے

قبائلیوں کا بدلہ لینے کا وعدہ، اور قانونی افواج صنعا کی جانب محاذ کھول رہی ہیں

کل صنعا میں حوثی نگرانی کر رہا ہے جبکہ علی عبد اللہ صالح کی رہائش گاہ جل رہی ہے (گیتی)، فریم میں مقتول سابق صدر (رویٹرز)

 

جدہ: سعيد الابيض – صنعاء: "الشرق الاوسط”

     یمن کے دارالحکومت صنعا میں جمعرات کے روز سے جاری کشیدگی کے آخری منظر میں یمن کے سابق صدر علی عبد اللہ صالح حوثی ملیشیاؤں کی گولی لگنے سے جان بحق ہوگئے ہیں۔

      صالح کے قتل کے علاوہ اس حادثہ میں ان کے دو بیٹے اور ان کی پارٹی کی کئی قیادتوں کی ہلاکت پر یمنی عوام غصے سے بھڑک اٹھی ہے جو کہ سیاسی قوتوں سمیت باغی افواج اور قبائل کے مابین اتحاد کی علامات کے ضمن میں ہے جو ان کا بدلہ لینا چاہتے ہیں۔ یمنی سیاسی ذرائع نے نشاندہی کی ہے کہ صالح کے خون نے حوثیوں کو تنہا کرنے کا دروازہ کھولا ہے، اور یہ لوگ اپنے سابق حلیف کو قتل کرنے کے بعد "عوامی کانگریس” میں سیاسی نمائندگی کی چھاؤں کھو چکے ہیں۔ اب انہیں قبائلیوں کے علاوہ قانونی افواج کا بھی کھلا سامنا ہے۔ دریں اثناء، کل ٹیلی ویژن پر صدر عبد ربہ منصور ہادی نے خطاب کرتے ہوئے "عوامی کانگریس پارٹی” کی قیادتوں، سیاسی جماعتوں اور سماجی طاقتوں سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ قانونی قیادتوں کے پیچھے کھڑے ہوں۔ جبکہ فوج نے صنعا کی جانب محاذ کھول دیا ہے۔ (۔۔۔)

 

منگل   – 17 ربيع الأول 1439 ہجری – 05 دسمبر 2017ء  شمارہ: [14252]
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>