پرانے موصل کے لوگ بے چینی، بد انتظامی اور مسخ شدہ لاشوں میں گھرے ہوئے ہیں - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعرات, 11 جنوری, 2018
0

پرانے موصل کے لوگ بے چینی، بد انتظامی اور مسخ شدہ لاشوں میں گھرے ہوئے ہیں

پرانے موصل میں جنگ سے تباہ حال کی ایک بستی (ا۔ٖف۔ب)

 

موصل: "الشرق الاوسط”

      عراق کا شہر موصل کو تنظیم داعش کے قبضہ سے آزاد کرائے جانے کے 6 ماہ گزر جانے کے باوجود ابھی تک مسخ شدہ لاشیں تاریخی جامع مسجد "نوری” کے سامنے پڑی ہیں۔ یاد رہے کہ یہ وہ جگہ ہے جہاں 3 سال قبل تنظیم کے لیڈر ابوبکر البغدادی نے اپنا نقطۂ نظر پیش کیا تھا۔ (۔۔۔)

      شہر میں بہت سے لوگ ہیں جو اس فضائی حملے کے دوران ہلاک ہونے والے اپنے رشتہ داروں کی نام گنواتے ہیں۔ ریاست ہائے متحدہ امریکہ کی قیادت میں بین الاقوامی اتحاد کا کہنا ہے کہ گذشتہ 3 سالوں کے دوران عراق اور شام پر ان کی بمباری کے دوران صرف 817 شہری جان بحق ہوئے ہیں۔ (۔۔۔)

 

جمعرات – 24 ربيع الثاني 1439 ہجری – 11 جنوری 2018ء  شمارہ: [14289]
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>