عفرین میں نئی فرنٹ ۔۔۔ اور دریائے فرات کے مشرق میں بمباری - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 23 جنوری, 2018
0

عفرین میں نئی فرنٹ ۔۔۔ اور دریائے فرات کے مشرق میں بمباری

دو امریکی اہلکار عین عرب کے راستے میں، اور واشنگٹن کی "سیکورٹی زون” کے قیام میں انقرہ کو امداد کی پیشکش

ترک حمایت یافتہ شامی اپوزیشن کے جنگجو کل شامی کی سرحد کے قریب ترک افواج کے ساتھ "سیلفی” بناتے ہوئے (ا۔ف۔ب)

 

انقرہ: سعید عبد الرازق – بیروت: بولا اسطیح

      ترک افواج نے شام کے شہر عفرین میں "زیتون کی شاخ” نامی فوجی آپریشن کے ضمن میں کل حلب کے مضافاتی شہر اعزاز سے زمینی کاروائی کا آغاز کیا ہے۔ ترک آرمی چیف کے بیان کے مطابق آپریشن (فرات کے مشرق میں) حسکہ کے علاقے تک پھیل چکا ہے، جبکہ ترک توپوں اور طیاروں نے اس علاقے کو نشانہ بناتے ہوئے بمباری بھی کی ہے۔ (۔۔۔)

     دریں اثناء، امریکی وزیر خارجہ ریکس ٹیلرسن کے ساتھ پیرس جانے والے ایک صحافی نے ان کے بیان کو نقل کیا ہے کہ ریاست ہائے متحدہ امریکہ نے ترکی سے کہا ہے کہ "ہمیں یہ دیکھنے دیں کہ ہم سیکورٹی زون قائم کرنے کے لئے کیا مل کر کام کرسکتے ہیں، جو آپ کی ضرورت ہوسکتی ہے”۔

      علاوہ ازیں کرد ذمہ دار نے "الشرق الاوسط” سے بات کرتے ہوئے کہا کہ وہ امید کرتے ہیں کہ "داعش” کے خلاف بین الاقوامی اتحاد کے لئے امریکی نمائندے برٹ میکغورک اور مشرق وسطی میں امریکی افواج کے کمانڈر جوزف فوٹل عین العرب میں امریکی افواج سے ملنے آئیں گے جو "شامی ڈیموکریٹک فورسز” کی حمایت کر رہی ہیں۔

 

منگل – 6 جمادى الأولى 1439 ہجری – 23 جنوری 2018ء  شمارہ: [14301]
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>