عدن آزمائش میں کامیاب اور توجہ محاذوں پر مرکوز - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعہ, 2 فروری, 2018
0

عدن آزمائش میں کامیاب اور توجہ محاذوں پر مرکوز

اتحاد کی طرف سے طویل المیعاد انسانی منصوبہ اور اس میں اقتصادی امداد کی شمولیت

یمن کی ایک خاتون اتحاد کے ایک پروگرام سے نکلنے کے بعد اپنے بیٹے کو گلے لگاتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے یعنی ان بچوں کو دوبارہ گھر لایا گیا ہے جنہیں حوثیوں نے لڑنے کے لئے فوج میں بھرتی کیا تھا

رياض: عبد الهادي حبتور عدن: "الشرق الاوسط”

         عدن نامی شہر درپیش موجودہ بحران کی آزمائش میں کامیاب اس وجہ سے ہوا ہے تاکہ یمن کی پوری توجہ محاذ اور امداد حاصل کرنے پر مرکوز ہو۔ سعودی عرب کی رہنمائی میں یمن کے اندر قانوں کی حمایت کرنے والے اتحاد نے کہا کہ عدن میں امن واستقرار دوبارہ بحال اس وقت ہوگا جب تمام فریق پر سکون ہوں گے، فتنہ کی آگ بجھ جائے گی اور حکمت کامیاب ہوگی اور اس نے یمن کے تمام فریق کو حکمت اور غور وفکر کے ساتھ معاملہ کرنے اور مرکزی مقصد پر توجہ مرکوز کرنے کی دعوت دی ہے اور وہ مقصد ایران کے تابع حوثی میلیشیاؤں کو مار بھگانا ہے۔۔(۔۔۔)

        اسی سلسلہ میں یمن میں سعودی عرب کے سفیر اور یمن کے اندر انسانی خدمت انجام دینے الے ایگزیکٹیو ڈائریکٹر محمد آل جابر نے "الشرق الاوسط” سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے اقوام متحدہ کی انسانی تنظیم کو یمن میں مدد پہنچانے کے سلسلہ میں اتحاد کے جہازوں کو استعمال کرنے کی اطلاع دے دی ہے اور انہوں نے یہ بھی اشارہ کیا کہ اتحاد کا یہ وسیع پیمانہ پر انسانی منصوبہ طویل مدت تک جاری رہے گا اور تمام معاشی پہلؤوں پر مشتمل ہوگا۔

جمعہ – 16 جمادی الاول 1440 ہجری – 02 فروری 2018ء  شمارہ نمبر: (14311)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>