واشنگٹن کی طرف سے دمشق اور ماسکو کے لئے ایک سرخ لائن - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعہ, 9 فروری, 2018
0

واشنگٹن کی طرف سے دمشق اور ماسکو کے لئے ایک سرخ لائن

دیر الزور کے علاقہ میں اتحادکی طرف سے کی جانے والی بمباری میں شامی انتظامیہ کے 100 سے زائد افراد ہلاک اور روس کی طرف سے الزامات میں وسعت

مشرق ومغرب کو ملانے والا تباہ شدہ دیر الزور نامی پل

بيروت: نذير رضا – واشنگٹن: ہبة القدسي – ماسكو: رائد جبر

         کل ریاستہائے متحدہ امریکہ کی قیادت میں دہشت گردی کے خلاف بین الاقوامی اتحاد نے کہا کہ وہ اور شام میں اس کے علاقائی شریک نے پرسو رات دیر الزور میں شامی حکومت کے حامی فورسز پر فضائی حملہ کیا ہے اور یہ اقدام نہر فرات کے قریب بے جا حملہ سے بچنے کے لیے کیا گیا ہے اور اس منصوبہ کے ذریعہ امریکہ نے ماسکو اور دمشق کے لے ریڈ لائن کھینچبے کا ارادہ کیا ہے۔(۔۔۔)

        ایک امریکی فوجی ذمہ دار نے شامی حکومت کے ہمنوا فورسز کے ایک سو سے زائد افراد کی ہلاکت کا اندازہ لگایا ہے اور یہ اس وقت کی بات ہے جب یہ فورسز اتحاد کی فورسز اور شام کی ڈیموکریٹک فورسز کے ساتھ بر سر پیکار تھیں۔(۔۔۔)

         اسی اثناء ماسکو نے لہجہ کو سخت کرتے ہوئے شام میں واشنگٹن کی نقل وحرکت کے خلاف الزامات میں وسعت اختیار کیا ہے اور روسی وزارت خارجہ نے اپنے بیان میں کہا کہ شام میں امریکی فوجی کا وجود امن وسلامتی کاروائی اور ملک کی وحدت کے لیے چیلنج ہے۔(۔۔۔)

 جمعہ – 23 جمادی الاول 1440 ہجری – 09 فروری 2018ء  شمارہ نمبر: (14318)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>