کیا شام، روس کے لئے دوسرا افغانستان ہے؟ - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 6 مارچ, 2018
0

کیا شام، روس کے لئے دوسرا افغانستان ہے؟

 

مشاری الذایدی

        کیا روس شامی دلدل میں پھنس چکا ہے اور مٹی کے نیچے سے اپنے خوفناک تیز دھاری ناخنوں سے خون بہانا شروع کر دیا ہے؟

       روسی وزارت دفاع نے اعلان کیا ہے کہ لاذقیہ کے قریب حمیمیم ایئر بیس پر روسی ٹرانسپورٹ طیارہ گر کر تباہ ہو گیا ہے۔ روسی وزارت دفاع کی جانب سے جاری سرکاری بیان کے مطابق اس "حادثہ” میں عملے کے 6 افراد سمیت اس میں سوار 26 افراد یعنی روسی افواج کے تقریبا 32 افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔

       روس کے مطابق  ٹرانسپورٹ طیارے کا یہ "حادثہ” کوئی براہ راست "حملے” کے نتیجے میں نہیں ہے، جو شامی سرزمین پر یا اس کی فضاء میں مزید روسی نقصانات کو یاد دلائے۔ (۔۔۔)

        یہ بات قبل از وقت ہوگی اگر کہا جائے کہ ہم ایک اور روسی افغانستان کے منظر کی جانب جا رہے ہیں، یہ جنگ 1979 میں افغانستان میں سرخ سوویتی فوج کی لڑائی کے دس سال تک جاری رہی۔ اس جنگ جے ضمن میں اکثر مسلم اور مغربی ممالک شامل رہے اور روس یہاں سے زبردست نقصان اٹھا کر نکلا۔ اس جنگ کے دوران تقریبا 15 ہزار ہلاکتیں، ہزارہا زخمی اور نفسیاتی متاثرین کے علاوہ اربوں کے سازوسامان کا نقصان شامل ہے ۔۔۔۔۔ روسی ریچھ کی ہیبت۔

       روسی فوجی ٹرانسپورٹ طیارہ حمیمیم ایئر بیس پر گر گیا یا گرایا گیا، یہ علاقہ لاذقیہ کے قریب اسد کے خاندان کا پناہ گاہ ہے۔ اس حادثہ سے شام میں روس کی چھوٹی چھپی راہوں کا انکشاف ہوا ہے۔ جبکہ شام اس وقت جنگی سپہ سالاروں کے خانوں میں منقسم ہے اور ہر ایک بین الاقوامی یا علاقائی یا پھر بیرونی گروہوں یعنی روایتی جرائم کے گروہوں کے ماتحت ہیں۔ چنانچہ روس سانپوں کی آماجگاہ ان تاریک دلدلی گڑہوں سے کیسے بچ پائے گا؟

      ابتداء میں روس کا شام میں داخل ہونا ایک اشتعال انگیزی اور غصے و انتقام کی کاروائی تھی۔۔۔ اور تشدد پسندی بھی۔

      فوجی دستوں کا داخلہ سیاست داںوں کی طاقت ہے اور جو ہوا بوتا ہے اسے طوفانوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

 

بدھ – 19 جمادى الآخر 1439 ہجری – 07 مارچ 2018ء  شمارہ: [14344]
الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

متعلقہ عنوانات‬:, , , , ,
شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>