سعودی عرب اور برطانیہ۔۔ اسٹریٹجک شراکت دار اور کھلے امکانات - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعرات, 8 مارچ, 2018
0

سعودی عرب اور برطانیہ۔۔ اسٹریٹجک شراکت دار اور کھلے امکانات

شہزادہ محمد بن سلمان کے دورہ کے لیے پرجوش شاہانہ استقبالیہ کا پہلا دن اور مائی کے ساتھ گفتگو

لندن: نجلاء حبريري ورنيم حنوش

         ولی عہد، سعودی عرب کے وزیر دفاع، نائب وزیر عظم شہزادہ محمد ابن سلمان ابن عبد العزیز نے کل برطانیہ کا سرکاری دورہ شروع کیا ہے اور وہاں ان کا غیر معمولی استقبال بھی کیا گیا ہے اور دونوں ملکوں کے درمیان اسٹریٹجک مشارکت کمیٹی کے افتتاح کے ذریعہ وسیع پیمانہ پر تعاون ہوں گے۔

        سعودی عرب کے ولی عہد نے کل ظہر کے وقت اپنے دورہ کا آغاز باکنگھام محل میں ملکہ دوم الیزا بتھ سے ملاقات کر کے کیا اور وہاں ان کا اعزاز اس انداز میں ہوا جیسا کہ بادشاہوں اور ملک کے سربراہوں کا ہوتا ہے اور اس شاہانہ استقبال میں سعودی عرب کے ولی عہد کے اعزاز میں دوپہر کے کھانا کا انتظام کیا گیا تھا۔

       اس کے بعد شہزادہ محمد ابن سلمان وزیر اعظم کے ہیڈ کواٹر کا رخ کیا جہاں وزیر اعظم ٹریزا مائی کے ساتھ مذاکرات ہوئے اور وہاں سعودی عرب اور برطانیہ کے درمیان اسٹریٹجک مشارکت کمیٹی کا افتتاح ہوا اور دونوں فریق نے تجارت اور سرمایہ کاری کی مقدار میں اضافہ کرنے کے سلسلہ میں معاہدہ کیا ہے۔(۔۔۔) اور اس میں برطانیہ کے اندر براہ راست سرمایہ کاری اور برطانیہ کے اندر سعودی عرب کی نئی چیزوں کی خرید وفروخت بھی شامل ہے۔(۔۔۔)

جمعرات – 20 جمادی الاول 1440 ہجری – 08 مارچ 2018ء  شمارہ نمبر: (14345)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>