ماسکو کی طرف سے حکومتی عناصر کی خلاف ورزیوں پر سزا دینے کی دھمکی - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: پیر, 28 مئی, 2018
0

ماسکو کی طرف سے حکومتی عناصر کی خلاف ورزیوں پر سزا دینے کی دھمکی

مشرقی شام میں "داعش” کے حملہ روس کے چند افراد ہلاک اور مخالف جماعتیں درعا کے حملہ کا مقابلہ کرنے کے لئے متحد

بیروت: نذیر رضا – دمشق . لندن: "الشرق الاوسط”

         ماسکو نے روسی فوجیوں کی شرکت سے آزاد کردہ علاقوں میں شام کی حکومتی فورسز کی طرف سے ہونے والی ہر طرح کی خلاف ورزی کے ساتھ سختی کا معاملہ کرنے کی دھمکی دی ہے۔

        شام میں حمیمیم نامی فوجی اڈہ نے اپنے فیس بک صفحہ پر کل بتایا ہے کہ دمشق کے جنوب میں روسی پولیس شام کی سرکاری فوج کے عناصر کی ایک بڑی تعداد کو شہریوں کے املاک کو لوٹنے اور چوری کرنے کی کوشش کرنے کے بعد ان کو گرفتار کرنے میں کامیاب ہوئی ہے۔(۔۔۔)

         کل انسانی حقوق کی شامی رصد گاہ کی طرف سے نشر کردہ نتائج کے مطابق شامی دیہات میں تنظیم داعش نے حکومتی افواج اور ان کے اتحادیوں کے جمع ہونے کی جگہوں پر غیر معمولی حملہ کیا ہے جن حملوں میں روسی جنگجوؤں سمیت درجنوں افراد زخمی ہوئے ہیں اور اس سے زیادہ خون آلود حملہ گزشتہ بدھ کو دیر الزور گورنریٹ میں ہوا ہے جس میں حکومتی فورسز اور ان کے حامیوں کے 35 افراد ہلاک ہوئے ہیں۔

       کل مخالف فورسز نے جنوبی فرنٹ کے سامنے حکومت کی فوجی نقل وحرکت کے پہلے براہ راست جواب میں اپنی فوجی اور سیاسی نقل وحرکت کی رفتار کو تیز کر دیا ہے اور شام کے مسلح مخالف جماعتوں درعا اور قنیطرہ میں "بچانے والی فوج” کے تحت متحد ہونے کا اعلان کیا ہے۔

پیر – 12 رمضان المبارک 1439 ہجری – 28 مئی 2018ء شمارہ نمبر:  (14326)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>