جرمن: ایک بس میں نو مسافروں کو زخمی کرنے والا غیر ملکی شخص گرفتاری - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: ہفتہ, 21 جولائی, 2018
0

جرمن: ایک بس میں نو مسافروں کو زخمی کرنے والا غیر ملکی شخص گرفتاری

کل لوبک شہر میں جرمن بس کے اندر مسافروں پر ایک شخص کی طرف سے سفید ہتھیار کا استعمال کئے جانے اور اس کی گرفتاری سے قبل کے منظر کو دیکھا جا سکتا ہے

برلن: "الشرق الاوسط”

             جرمن کے لوبک شہر میں ایک بس کے اندر سفید ہتھیار کے ذریعہ ہونے والے حملہ میں نو افراد زخمی ہوئے ہیں۔

           مسافروں کے درمیان ایک گواہ نے بتایا کہ حملہ آور نے فرار ہونے کی کوشش کی لیکن گشت کرنے والی پولیس کی ایک ٹیم نے اچانک اسے پکڑ لیا اور جرمن پولیس نے ابھی تک اس حملہ کے مقصد کے بارے میں کچھ نہیں بتایا ہے اور جرمن پراسیکیوٹر نے بتایا ہے کہ بس کے مسافروں نے پولیس کے پہنچے سے پہلے ہی حملہ آور کو پکڑ لیا تھا اور پولس نے اسے گرفتار کر لیا۔

           ذرائع ابلاغ نے بتایا ہے کہ مسافروں نے چلاتے ہوئے بس سے چھلانگ لگانا شروع کر دیا تھا  کیونکہ معاملہ بہت سخت تھا اور حملہ آور باورچی خانہ میں استعمال کیا جانے والا چاقو لے رکھا تھا۔

          ابھی تک اس حملہ کے بارے میں علم نہیں ہو سکا ہے لیکن پبلک پراسیکیوٹر آفس کے ذرائع نے اشارہ کیا ہے کہ حملہ آور غیر ملکی ہے۔(۔۔۔)

ہفتہ – 08 ذی قعدہ 1439 ہجری – 21 جولائی 2018ء شمارہ نمبر (14480)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>