ایران کا مقابلہ کرنے کے لئے ہمنواؤں کے ساتھ امریکی ترتیب - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعہ, 17 اگست, 2018
0

ایران کا مقابلہ کرنے کے لئے ہمنواؤں کے ساتھ امریکی ترتیب

واشنگٹن: ہبہ القدسی

           کل امریکی وزارت خارجہ نے جوہری معاہدہ سے نکلنے کے بعد تہران کے خلاف صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی انتظامیہ کی پالیسیوں کو ترتیب دینے کے سلسلہ میں کام کرنے کی ایک گروپ تشکیل دینے اور امن واستقرار کو نشانہ بنانے والے اس کے رویہ کا مقابلہ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

        وزیر خارجہ مائک پومپیو نے سیاسی منصوبہ بندی کے ڈائریکٹر برائن ہوک کو ایران کا خاص سفیر بنایا ہے اور انہیں اس بات کا بھی ذمہ دار بنایا کہ وہ کام کے گروپ کی سرگرمیوں کی نگرانی کریں اور واشنگٹن کے ساتھ ان ہمنواؤں کے ساتھ کی جانے والی کوششوں کو ترتیب دیں جو ایران کی طرف سے دہشت گردی کی مدد کرنے، اس کے بیلسٹک میزائل پروگرام اور بین الاقوامی نیویگیشن کے امن وسلامتی کے سلسلہ میں ہونے والے خطرات سے بے چین ہیں۔

        اسی سلسلہ میں ہوک نے کہا اب کوئی گفتگو نہیں ہو سکتی ہے الا یہ کہ ہم یہ دیکیھیں کہ ایران اپنے تصرفات کی تبدیلی میں سنجیدہ ہے۔

       واشنگٹن کے اندر سعودی عرب کے سفیر شہزادہ خالد ابن سلمان نے ٹویٹ کیا ہے کہ سعودی عرب کبھی بھی حوثیوں کو یہ موقعہ نہیں دے گا وہ دوسرا حزب اللہ بنے اور ایران اسی کی کوشش میں ہے اور انہوں چند ایسے دلائل کی طرف بھی اشارہ کیا ہے جن سے معلوم ہوتا ہے کہ لبنان کے حزب اللہ نے حوثیوں کی مدد جنگجؤوں، ہتھیاروں اور تجربات کے ذریعہ کیا ہے اور انہوں نے مزید کہا کہ ایران کے تابع میلیشیاء اور دیگر جماعتیں علاقہ کے اندر انارکی اور تبای وبربادی مچانے کے لئے کام کر رہی ہیں۔

جمعہ – 06 ذی الحجہ 1439 ہجری – 17 اگست 2018ء شمارہ نمبر (14507)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>