اسرائیل کی طرف سے قطر کے ساتھ ایک بلند پایہ ملاقات کا انکشاف - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعرات, 23 اگست, 2018
0

اسرائیل کی طرف سے قطر کے ساتھ ایک بلند پایہ ملاقات کا انکشاف

تل ابیب: "الشرق الاوسط”

          اسرائیلی ذرائع نے کہا ہے اسرائیلی فوج کے وزیر اویگدور لیبر مین نے پراسرار طور پر قطر کے وزیر خارجہ محمد ابن عبد الرحمن آل ثانی سے جولائی کے آخری میں ملاقات کی ہے۔

        اسرائیل کی والا نیوز نامی ویب سائٹ نے کل انکشاف کیا ہے کہ قبرص میں ہونے والے اجلاس میں غزہ پٹی میں تحریک حماس اور اسرائیل کے درمیان ہونے والی جنگ بندی معاہدہ کے ایک حصہ کے طور پر غزہ کے لئے سمندری بندرگاہ کے قیام کے امکان کے سلسلہ میں گفت وشنید ہوئی ہے اور جہاں تک اسرائیل کی ٹین نامی چینل کی بات ہے تو اس نے اس بات کا بھی تذکرہ کیا ہے کہ لیبر مین نے قبرص اجلاس کے دوران غزہ کے اندر قطر کے اس سفیر محمد العمادی سے بھی ملاقات کی ہے جو ہمیشہ اسرائیل آتے جاتے رہتے ہیں۔

         اس اجلاس کا انکشاف ایسے وقت میں ہوا جس وقت اسرائیل اور حماس کے رہنماء حل کی ان تجویزات کے سلسلہ میں غور وفکر کر رہے ہیں جن کے سلسلہ میں دونوں فریق کے درمیان حل تک پہنچنے کے لئے قاہرہ کوشش کر رہا ہے تاکہ تحریک کے ماتحت غزہ پٹی پر سنہ 2007ء سے اسرائیل کی طرف سے کی جانے والے محاصرہ کو ختم کیا جا سکے۔

        حماس کے سیاسی دفتر کے صدر اسماعیل ہنیئہ نے غزہ شہر کے اندر بقرعید کے پہلے دن اپنی تقریر کے دوران اس بار پر زور دیا تھا کہ تحریک کشیدگی  کم کرنے والے مذاکرات کے سلسلہ مسلسل درپہ پر ہے۔

جمعرات – 11 ذی الحجہ 1439 ہجری – 23 اگست 2018ء شمارہ نمبر (14513)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>