شامی دستور کی تعیین کرنے میں ضامن ممالک ناکام - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: بدھ, 19 دسمبر, 2018
0

شامی دستور کی تعیین کرنے میں ضامن ممالک ناکام

کل جینوا میں ترکی، روس اور ایران کے وزرائے خارجہ کو دیکھا جا سکتا ہے

لندن: ابراہیم حمیدی

        روسی وزیر خارجہ سرجیو لاوروف، ترکی کے وزیر خارجہ مولود جاویش اوگلو  اور ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف کل جینیوا میں اقوام متحدہ کے سفیر سٹیفن ڈی مسٹورہ کے ساتھ ملاقات کے درمیان شام کے آئینی کمیشن کے قیام کے سلسلہ میں ناکام رہے ہیں جبکہ یہ تین ممالک ہی آستانہ کاروائی کے محافظ تھے۔

        لاوروف تو اس وقت اچھنبھے میں پڑ گئے جب ان کو پتہ چلا کہ ڈی مسٹورہ شام کے آئینی کمیشن کے کام اور اس میں خود مختار افراد کی فہرست کے تابند ہیں لہذا تینوں محافظ ممالک کا اجلاس کسی کامیابی یا کمیٹی کی تشکیل یا تین وزیروں کے مشترکہ پریس کانفرنس کے بغیر ختم ہوگیا اور اس کا مطلب یہ ہوا کہ فائل کو کل کی طرف محول کر دیا گیا جہاں نیویارک میں ڈی مسٹورہ کی طرف سے پیش کردہ آخری کامیابی کے بعد اور اپنے جانشین جیر پیڈرسون کی طرف فائل منتقل کرنے سے پہلے غیر معمولی طور پر مذاکرات ہوں گے۔(۔۔۔)

بدھ 11 ربیع الثانی 1440 ہجری – 19 دسمبر 2018ء – شمارہ نمبر [14631]

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>