چین اور سعودی عرب: مستقبل میں وسیع پیمانہ پر ساجھے داری - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: ہفتہ, 23 فروری, 2019
0

چین اور سعودی عرب: مستقبل میں وسیع پیمانہ پر ساجھے داری

کل دار الحکومت بیجنگ میں عوامی بڑے حال کے اندر چینی صدر کو سعودی عرب کے ولی عہد کا استقبال کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے

بیجنگ: "الشرق الاوسط”

        کل سعودی عرب اور چین نے مختلف میدانوں میں معاہدے کے ذریعہ مستقبل کے اندر سرمایہ کاری کے سلسلہ میں غیر معمولی ساجھے داری کا آغاز کیا ہے اور یہ ساجھے داری سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد ابن سلمان کی طرف سے چین کے موجودہ دورہ کے ضمن میں ہوئی ہے۔

       کل چینی صدر چی جنپنگ نے شہزادہ محمد ابن سلمان کا استقبال بیجنگ میں کیا ہے اور دونوں رہنماؤں نے ایک اجلاس بھی منعقد کی جس کے دوران دونوں نے علاقہ کے اندر کے اسٹریٹیجک تعلقات اور صورتحال کا جائزہ لیا اور بین الاقوامی سطح پر ہونے والے نئے امور کا بھی جائزہ لیا لیا۔

       اجلاس کے دوران سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد ابن سلمان نے چین اور سعودی عرب کے درمیان کام کمیٹی کی سرگرمی پر زور دیا اور پرزور انداز میں یہ بھی کہا کہ یہ کمیٹی دونوں ملکوں کے درمیان مزید مواقع پیدا کر سکتی ہے۔

       اسی سلسلہ میں چین کے صدر نے دونوں ملکوں کے درمیان وسیع پیمانہ پر ہونے والی اسٹریٹیجک ساجھے داری کے تعلقات کو ہمیشہ فروغ دینے کی طرف اشارہ کیا ہے اور اس بات کی طرف بھی اشارہ کیا کہ چند سالوں میں اہم مشترکہ علاقائی اور بین الاقوامی مسائل کے سلسلہ میں ہمیشہ تعاون ہوا ہے اور اخیر میں انہوں نے اس سلسلہ میں سعودی عرب کے ولی عہد کے اہم تعاون کو سراہا ہے اور پرزور انداز میں یہ بھی کہا کہ اس سے دونوں ملکوں کے درمیان کے تعلقات میں نئی طاقت وروح پیدا ہوگی۔(۔۔۔)

ہفتہ 18 جمادی الآخر 1440 ہجری – 23 فروری 2019ء – شمارہ نمبر [14697]

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>