گولان پہاڑی کے فیصلہ کی وجہ سے شبعا کی کھیتوں کے سلسلہ میں لبنان کے اندر خدشات - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعہ, 29 مارچ, 2019
0

گولان پہاڑی کے فیصلہ کی وجہ سے شبعا کی کھیتوں کے سلسلہ میں لبنان کے اندر خدشات

شبعا کھیت کے مقابل لبنان کی الغجر نامی گاؤں میں اقوام متحدہ کی فورسز کو دیکھا جا سکتا ہے

بیروت: بولا اسطیح

       مقبوضہ گولان پہاڑی پر اسرائیل کی سیادت کا امریکی انتظامیہ کی طرف سے اعتراف کرنے کے سلسلہ میں امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے اعلان کی وجہ سے لبنان کے اندر خدشات پیدا ہو رہے ہیں کیونکہ اس اعلان کی وجہ سے لبنان کی شبعا کے کھیت اسرائیل کی سیادت میں ضم ہو جائیں گے جبکہ یہ لبنان کی زمین ہے جسے اسرائیل گولان کا ایک حصہ سمجھتا ہے۔

      لبنان کے اندر خدشات اس طرح رونما ہو رہے ہیں کہ لبنان نے سنہ 2000ء میں اپنے جنوب سے اسرائیلی فوج کے انخلاء کے بعد شبعا اور کفر شوبا کے کھیت کا مطالبہ کیا تو اس وقت اقوام متحدہ کا جواب تھا کہ یہ زمین گلان کی پہاڑی سے مربوط ہے۔(۔۔۔)

جمعہ 22 رجب المرجب 1440 ہجری – 29 مارچ 2019ء – شمارہ نمبر [14731]

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>