الشرق الاوسط کے ساتھ برہم صالح کی گفتگو: عراق اپنے پڑوسیوں کو تکلیف پہنچانے کی آماجگاہ نہیں بن سکتا ہے - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 2 اپریل, 2019
0

الشرق الاوسط کے ساتھ برہم صالح کی گفتگو: عراق اپنے پڑوسیوں کو تکلیف پہنچانے کی آماجگاہ نہیں بن سکتا ہے

عراقی صدر برہم صالح کو دیکھا جا سکتا ہے

ٹیونس: غسان شریل

       عراقی صدر برہم صالح نے پرزور انداز میں کہا کہ ان کا ملک اپنے کسی پڑوسی کو تکلیف پہنچانے کی آماجگاہ نہیں بن سکتا ہے اور اس کا فائدہ اپنے تمام اسلامی اور عرب پڑوسیوں کے ساتھ مل کر رہنے میں ہے اور انہوں نے پرزور انداز میں کہا کہ بغداد کا اختیار یہ ہے کہ وہ محوروں کی پالیسیوں میں شامل نہیں ہوگا اور انہوں نے یہ بھی کہا کہ عراق طاقت ور ہو کر علاقہ کے اندر توازن پیدا کرکے دیگر ممالک کے درمیان واسطہ بن سکتا ہے۔

       ٹیونس میں منعقدہ عرب سربراہی اجلاس کے بعد الشرق الاوسط کے ساتھ ہونے والی گفتگو میں عراقی صدر نے شام کے اندر باقی ماندہ دہشت گردی کے چیلنج کو کم نہ سمجھنے کی دعوت دی ہے اور اسی طرح انہوں نے پناہگزینوں کی پریشانی کی مشکل میں پرخطر انسانی چیلنج کو بھی کم نہ سمجھنے کی دعوت دی ہے اور عرب کو اہل شام کے مطابق سیاسی حل کے ذریعہ سیاسی بحران سے نکلنے کے لئے شام کی مدد کرنے کی دعوت دی ہے۔(۔۔۔)

منگل 26 رجب المرجب 1440 ہجری – 02 اپریل 2019ء – شمارہ نمبر [14735]

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>