ایران کے پروپگنڈے کو نشر کرنے والے جعلی عرب ویب سائٹس اور نیٹورکس - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: جمعرات, 4 اپریل, 2019
0

ایران کے پروپگنڈے کو نشر کرنے والے جعلی عرب ویب سائٹس اور نیٹورکس

لندن: الشرق الاوسط

      کل برطانوی اوکسفورڈ یونیورسیٹی کی طرف سے نشر کردہ ریسرچ نے انکشاف کیا ہے کہ ایران اپنے پروپگنڈے اور عالم عربی میں مداخلت کو نشر کرنے کے لئے ریکارڈ کردہ جعلی بیانات اور گمراہ کن ناموں سے ویب سائٹوں کا استعمال کر رہا ہے اور خاص طور سے سعودی عرب کو نشانہ بنانے کی کوشش کر رہا ہے۔

     اوکسفورڈ یونیورسیٹی کے اندر کمپیوٹر پروپیگنڈے کی یونٹ کے تین اسکالروں کی طرف سے تیار کردہ عالم عرب میں ایرانی مداخلت کے اعداد وشمار نامی اس ریسرچ پیپر میں ایک تجزیہ پیش کیا ہے جو عربی زبان میں 154 سے زائد ٹویٹ پر مشتمل ہے اور یہ ٹویٹس ان اکاؤنس سے کئے گئے جنہیں ٹویٹر ویب سائٹ نے گذشتہ سال کے اگست ماہ میں بند کر دیا تھا کیونکہ ان ویب سائٹوں نے گمراہی کے مشن میں حصہ لیا تھا اور اس کا مرکز ایران تھا۔(۔۔۔)

جمعرات 28 رجب المرجب 1440 ہجری – 04 اپریل 2019ء – شمارہ نمبر [14737]

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>