سوڈانی امن وسلامتی کے معاہدہ کے سلسلہ میں مسلح تحریکات کے دستخط کا انتظار - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: بدھ, 24 جولائی, 2019
0

سوڈانی امن وسلامتی کے معاہدہ کے سلسلہ میں مسلح تحریکات کے دستخط کا انتظار

مظاہرہ میں قتل ہونے والے کی یاد کو تازہ کرنے کے لئے کل خرطوم میں طلبہ کو مظاہرہ کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے

خرطوم: احمد یونس اور محمد امین یاسین

       کل اہل سوڈان کی نگاہ ایتھوپیا کی دار الحکومت ادیس بابا میں آزادی وتبدیلی کے رہنماؤں اور انقلابی فرنٹ یعنی سوڈانی مسلح تحریکوں کے نمائندگان کے درمیان ہونے والے اجلاس میں اس دستاویز پر ہونے والی دستخط پر مرکوز ہے جس میں امن وسلامتی قائم کرنے اور انتقالی مرحلہ کی تفاصیل کو متعین کرنے کی بات کی گئی ہے اور معاہدہ کی وجہ سے وزراء اور حکومت کی اس کمیٹی کا مسئلہ ختم ہو جائے گا جس کی تشکیل ابھی ہونی ہے۔

      دستاویز میں لکھا گیا ہے کہ دونوں کمیٹی میں آزادی وتبدیلی کے ضمن میں اقالیم کی نمائیندگی ضروری ہے اور اس کے علاوہ آزادی کے رہنماؤں کے ڈھانچہ کو اس کی ایک صدارتی کمیٹی کے ذریعہ دوبارہ قائم کرنا بھی ضروری ہے اور یہ کمیٹی ہی تین سال تک متعینہ انتقالی مرحلہ کی نگرانی کرے گی۔

       انقلابی فرنٹ کے ترجمان محمد زکریا نے الشرق الاوسط کے ساتھ گفتگو کرتے ہؤیے کہا کہ گذشتہ ہفتہ سے ادیس بابا میں جاری مشاورات مناصب کو تقسیم کرنے اور مسئلہ کو حل کرنے سے متعلق ہیں بلکہ ہم نے مکمل طور پر جنگ کو روکنے اور امن وسلامتی کی فایل کے سلسلہ میں پورے کاغذات کا مطالعہ کیا ہے اور ڈیموکریٹک سول انتقالی کو پورا کرنے کے لئے دستوری دستاویز اور سیاسی اعلان میں اسے شامل کیا جائے گا۔(۔۔۔)

بدھ 21 ذی قعدہ 1440 ہجری – 24 جولائی 2019ء – شمارہ نمبر [14848]

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>