واشنگٹن کی طرف سے دہشت گردی کے الزام میں تہران کے ٹینکر کا تعاقب - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: ہفتہ, 17 اگست, 2019
0

واشنگٹن کی طرف سے دہشت گردی کے الزام میں تہران کے ٹینکر کا تعاقب

کل طارق پہاڑ کی طرف گریس ون کو جاتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے

نیویارک: علی بردی ۔ واشنگٹن: ہبہ القدسی ۔ لندن: الشرق الاوسط

        واشنگٹن نے دہشت گردی کے الزام میں طارق پہاڑ حکومت کی حراست میں ایرانی تیل کے ٹینکر کا تعاقب کیا ہے اور اس نے دوسری مرتبہ برطانیہ اور طارق پہاڑ کی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ٹینکر کو چھوڑے جانے کے فیصلہ کے سلسلہ میں نظر ثانی کرے اور یہ بھی کہا کہ اس کا تعاون پاسداران انقلاب کے ساتھ ہے۔

       ایک طرف کل طارق پہاڑ کی حکومت نے پر زور انداز میں کہا کہ ایرانی حکومت کی طرف سے اس کے پاس تحریری وعدے ہیں جس میں لکھا گیا ہے کہ گریس ون ٹینکر شام کی طرف نہیں جائے گا اور دوسری طرف ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان نے اس بات کی نفی کی ہے کہ تہران نے اس طرح کا کوئی وعدہ کیا ہے اور طارق پہاڑ کی حکومت کے ترجمان نے کہا کہ یہ موقف لکھا ہوا ہے۔(۔۔۔) جس میں اس بات کی تاکید ہے کہ ایران نے یہ وعدہ کیا ہے اور اس میں اس بات کی طرف بھی اشارہ ہے کہ یہ دستاویزات آج کل سنے جانے والے سیاسی بیانوں سے زیادہ طاقتور ہیں۔(۔۔۔)

ہفتہ 16 ذی الحجہ 1440 ہجری – 17 اگست 2019ء – شمارہ نمبر [14872]

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>